جہلم

خسرہ سے پاک ضلع ہماری ترجیحات میں شامل ہیں۔ ڈاکٹر وسیم اقبال، ڈاکٹر میاں مظہر حیات

جہلم: سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر وسیم اقبال ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرڈاکٹر میاں مظہر حیات نے مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ خسرہ سے پاک ضلع ہماری ترجیحات میں شامل ہیں ، صرف محکمہ صحت ہی نہیں بلکہ دیگر تمام متعلقہ محکموں اور عوام کی شرکت اور اجتماعی کوششوں سے ہی ان امراض پر قابو پایا جا سکتا ہے ، خسرہ ایک مہلک مرض ہے جو کہ ایک مریض سے دوسرے مریض میں منتقل ہونے والا وبائی مرض ہے جو بہت جلد پورے علاقے کو اپنی لپیٹ میں لے سکتا ہے ، اس کے تدارک کے لئے تمام وسائل بروے کار لائے جارہے ہیں اور اس سلسلے میں کوئی سمجھوتا نہیں کیا جائیگا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ضلع بھر میں خسرہ مہم کے سلسلے میں شہریوں کو آگاہی کے حوالے سے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا ، جس میں ہیلتھ سٹاف سمیت ،علماء ٹیچر، یونین کونسل چیئرمین اور معززین علاقہ نے شرکت کی سی او ہیلتھ نے بتایا کہ سال 2018 میں خسرہ کے مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر محکمہ صحت نے خسرہ جیسی موذی مرض کے خلاف مہم چلانے کا حتمی فیصلہ کیاہے۔

دوسری جانب ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرڈاکٹر میاں مظہر حیات نے کہا ہے کہ ماں کا دودھ سونے کی بوندوں کے مترادف ہے اور دنیا بھر کے طبی محققین اس بات پر متفق ہیں کہ پیدائش کے فوراً بعد بچے کو ماں کا دودھ پلایا جانا چاہیے جس سے محروم ہونے والے بچے بعد میں کئی قسم کی پیچیدگیوں کا شکار ہو جاتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ماں کا دودھ ہر بچے کا بنیادی حق ہے اور معاشرے کے ہر باشعور شہری کی ذمہ داری ہے کہ وہ بچوں کو ان کے بنیادی حق سے محروم نہ ہو نے دیں کیونکہ ماں کا دودھ زندگی کی بنیاد ہے۔ ماں کا دودھ ایک بہترین گھٹی کا کام کرتا ہے اور پیدائش کے ایک گھنٹے کے اندر بچے کو ماں کا دودھ کئی بیماریوں سے بچاؤ کی ضمانت ہے۔

ڈاکٹر میاں مظہر حیات نے ہفتہ صحت کی تفصیلات بیان کرتے ہوئے حاضرین کو بتایا کہ اس ہفتے کے دوران 2 سے 5 سال تک کی عمر کے بچوں کو پیٹ کے کیڑے مارنے کی دوائی پلائی جائے گی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button