دینہ

دینہ شہر و گردونواح میں ادویات کی قیمتیں کم کرنے کے حکومتی دعوے محض نعروں تک ہی محدود

دینہ: شہر و گردونواح میں ادویات کی قیمتیں کم کرنے کے حکومتی دعوے محض نعروں تک ہی محدود، ادویات کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ ، غریب عوام کے لئے علاج معالجہ پہنچ سے دور ، سہولیات کے فقدان کی وجہ سے عطائیت پرستی پروان چڑھنے لگی۔ تحصیل دینہ کی بیشتر آبادی پہلے ہی خط غربت سے نیچے زندگی بسر کرنے پر مجبور ہے ، کمر توڑ مہنگائی کی وجہ سے غریبوں کے لئے 2 وقت کی روٹی کا حصول بھی خواب بن گیا ہے ،علاج معالجہ بھی غریبوں کی پہنچ سے کوسوں میل دور ہوکر رہ گیا۔

تفصیلات کے مطابق تحصیل دینہ میں غریب عوام کو علاج معالجہ میں شدید دشواری کا سامنا کرنا پڑ رہاہے ، مہنگی ادویات مریضوں کی پہنچ سے کوسوں میل دور ہو گئیں ہیں ، پرائمری ہیلتھ سنٹر اور ڈسپنسریوں میں نہ صرف ادویات کی قلت پائی جاتی ہے بلکہ دیگر اہم سہولیات کا بھی شدید فقدان ہے،ادویات کی قلت کی وجہ سے وسائل نہ ہونے پر لوگ نہ صرف تعویز گنڈوں کا سہارا لیتے ہیں بلکہ عطائیوں سے علاج معالجہ کروا کے اپنی زندگیاں بھی داؤپر لگا رہے ہیں۔

ہر دوسرا شخص مختلف مسائل کا شکار ہونے کیوجہ سے شوگر اور بلڈ پریشر کے عارضہ میں مبتلا ہو چکاہے، ان بیماریوں کی ادویات کی قیمتوں میں ہونے والے اضافے کیوجہ سے سالانہ شرح اموات میں غیر معمولی اضافہ ہورہا ہے،صحت جیسی بنیادی سہولت عوام کو فراہم کرنا حکومت وقت کی اولین ذمہ داریوں میں سے ایک ذمہ داری ہے ، مگر افسوس وطن عزیز کو آزاد ہوئے73 سال کا طویل عرصہ گزرچکا ہے مگر غریبوں کو صحت کی بنیادی سہولیات فراہم نہ ہونا منتخب حکومتوں کی کارکردگی پر بڑا سوالیہ نشان ہے۔

عوام کو علاج معالجے کی بہتر سہولیات کی فراہمی کے لئے سرکاری ہسپتال اور ڈسپنسریوں میں ادویات کی فراہمی کو یقینی بنانا ہوگا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button