پنڈدادنخاناہم خبریں

عید قریب آتے ہی پنڈدادنخان میں چور ڈکیت اور نوسرباز خواتین کا گروہ بے لگام ہوگئے

پنڈدادنخان: عید قریب آتے ہی پنڈدادنخان میں چور ڈکیت اور نوسرباز خواتین کا گروہ بے لگام ہوگئے، مقامی صحافی بھی چوروں کے نشانے پر، نامعلوم چور صفر علی خان کے قیمتی موبائل چوری کرکے رفو چکر، گزشتہ چند روزقبل اہل علاقہ نے مویشی چوری کی واردات ناکام کردی ،تحصیل پنڈدادنخان میں چوری ڈکیتی کی وارداتیں پولیس کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں۔

تفصیلات کے مطابق چند روز قبل پنڈدادنخان کے مقامی صحافی اپنے نواحی گاؤں ہرن پور گھر کی چھت پر سور ہے تھے رات کی تاریکی میں نامعلوم چور قیمتی موبائل چوری کرکے فرار ہوگئے جن میں قیمتی ڈیٹا موجود تھا، پولیس کو اطلاع کرنے کے باوجود تاحال کوئی کارروائی نہ ہوسکی۔

عرصہ دراز سے پنڈدادنخان میں تعینات ڈی ایس پی سلیم خٹک کے علم میں سارا معاملہ ہونے کے باوجود نہ تو ابھی تک جائے وقوعہ کا معائنہ کیا گیا نہ ہی تسلی بخش ریسپانس ملا جبکہ دوسری جانب نوسرباز خواتین کا گروپ بھی متحرک ہوگیا۔

پنڈدادنخان مین بازار سے ایک خاتون سامان اور 15000 روپے نقدی سے محروم جبکہ دوسرے واقعہ میں ایک اور خاتون 8000 ہزار اور قیمتی موبائل سے ہاتھ دھو بیٹھی۔

چند روز قبل نواحی قصبہ میں رات 1بجے کے قریب چھ مسلح افراد نے ڈیرہ پر دھاوا بول دیا اور اسلحہ کے زور پر عبدالرؤف نامی زمیندار کو شدید زودکوب کے بعد قریبی درخت کے ساتھ منہ میں کپڑا ڈال کر رسیوں سے باندھ دیا اور تقریبا 20لاکھ روپے زائد کے مویشی جن میں تین قیمتی گائے تین قیمتی بھینسیں اور بچھڑا شامل ہے کو ٹرک کے ذریعے بذریعہ موٹروے فرار ہوگئے جبکہ موٹروے انٹرچینج پر نیچے والا کیمرہ خراب ہونے سے ٹرک کا نمبر نظر نہ آیا اوپر والے کمپیوٹر کیمرے کے ذریعے ٹرک میں لدھے ہوئے مویشی نظر آئے۔

عوامی سماجی حلقوں نے آر پی او راولپنڈی اور DPOجہلم سے مطالبہ کیا ہے کہ پنڈدادنخان میں پولیس کو متحرک کیا جائے گشت کے نظام کو بہتر کیا جائے اور عید تک مین بازاروں میںایک پولیس اہلکار تعینات کیا جائے تاکہ جرائم پر قابو پایا جا سکے

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button