سوہاوہاہم خبریں

میرے متعلق سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی خبریں جھوٹی اور من گھڑت ہیں۔ راجہ زاہد عزیز

سوہاوہ: میرے متعلق سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی خبریں جھوٹی اور من گھڑت ہیں، میرے الیکشن لڑنے کے اعلان نے وقت کے فرعونوں کی نیندیں حرام کردی ہیں، میں نے اللہ کی خوشنودی حاصل کرنے کے لیے میدان سیاست میں قدم رکھا ہے اور انشاء اللہ انکو کیفر کردار تک پہنچا کردم لونگا۔

ان خیالات کا اظہارتحصیل دینہ اور تحصیل سوہاوہ کے مشترکہ صوبائی حلقے سے الیکشن لڑنے کا اعلان کرنے والے نوجوان راجہ زاہد عزیز نے گزشتہ روز میڈیا کے نمائندوں سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئےکیا۔ انہوں نے کہا کہ سوشل میڈیا پر جھوٹا پراپیگنڈہ کرنے سے انکو کچھ حاصل ہونے والا نہیں اب عوام باشعور ہوچکے ہیں اور انکے دقیانوسی طرز سیاست سے بھی تنگ آچکے ہیں، انکو آنے والے وقت میں اپنی سیاسی ناؤ ڈوبتی نظر آرہی ہے جس کو بچانے کی خاطر یہ حسب روایت منفی ہتھکنڈوں کا سہارا لے رہے ہیں مگر یہ شاید بھول بیٹھے ہیں کہ سب سے بزرگ وبرتر ذات تو صرف اللہ تعالیٰ کی ہے ،انکے دن گنے جاچکے ہیں اور اب یہ بہت جلد اللہ کی پکڑ میں آنے والے ہیں ، منفی اور جھوٹا پراپیگنڈہ کرکے یہ مجھے بلیک میل کرنا چاہتے ہیں مگر یہ سراسر انکی بھول ہے،میں ان کی گیدڑ بھبکیوں سے نہ تو ڈرا ہوں اور نہ آئندہ ڈروں گا۔

راجہ زاہد عزیز نے کہا کہ میں نے جب سے صوبائی حلقے سے الیکشن لڑنے کا اعلان کیا ہے وقت کے فرعونوں کی نیندیں حرام ہوگئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میرے چند سیاسی مخالفین جو تمام عمر عوام کے حقوق کو سلب کرکے اپنی تجوریاں بھرنے میں لگے رہے میں نے انکے خلاف علم جہاد بلند کیا ہے اور اللہ کی خوشنودی کی خاطر عوام کے حقوق کی جنگ لڑنے کا عزم مصمم کیا ہے۔اللہ کے فضل وکرم سے دونوں تحصیلوں کے نوجوان طبقے اور غریب عوام کی جانب سے مجھے جو پذیرائی مل رہی ہے اس کو دیکھتے ہوئے ان لوگوں کی نیندیں حرام ہوچکی ہیں۔ ان کے پاس میرا راستہ روکنے کے لئے کوئی چارہ نہ ہونے کی وجہ سے یہ سوشل میڈیا کے ذریعے منفی اور جھوٹے پراپیگنڈہ کرکے میری کردار کشی کرنے میں لگے ہوئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ گزشتہ چند روز سے سوشل میڈیا کے ذریعے غائبانہ ناموں سے یہ میرے خلاف جو بہتان تراشی کررہے ہیں اس میں کوئی صداقت نہیں۔ میں انکو برملا چیلنج کرتا ہوں کہ وہ سامنے آکر میرے اوپر لگائے جانے والے الزامات کے ثبوت پیش کریں ۔ بصورت دیگر میں انکے خلاف قانونی چارہ جوئی کا حق محفوظ رکھتا ہوں۔یہ لوگ سوشل میڈیا کے ذریعے میری کردار کشی کرنے کی کوششوں میں لگے ہوئے ہیں تاکہ میں ان کے ہاتھوں بلیک میل ہوجاؤں مگر یہ سراسر انکی بھول ہے۔ میں نے میدان سیاست میں اس لئے قدم رکھا ہے کہ میں ایسے عوام دشمن سیاستدانوں کے خلاف عملی جہاد کرسکوں اور کل اللہ تعالیٰ کی بارگاہ میں سرخرو ہوسکوں۔انکی مجھے ڈرانے دھمکانے کی اس طرح کی اوچھی حرکتوں سے انکو کچھ حاصل ہونے والا نہیں ۔

انہوں نے سوشل میڈیا کے ذریعے مجھ پر لگائے جانے والے الزامات کو ثابت نہ کیا تو میں انکو نہ صرف قومی بلکہ عوام کی بھی عدالتوں میں گھسیٹوں گا۔یہ بلیک میلر اور قبضہ مافیا سیاسی فرعون ساری عمر عوام کوظلم کی چکی میں پیستے رہے ہیں اور کوئی انکو روکنے ٹوکنے والا نہیں تھا۔ اب اللہ کے فضل وکرم سے میں نے انکے خلاف عملی جدوجہد کا آغاز کردیا ہے ۔ انشاء اللہ ایک روز حق وسچ کی فتح ہوگی اور ظلم وستم کے پیروکار کیفرکردار کو ضرور پہنچیں گے۔انکی میرے اوپر بہتان تراشیاں سب دھری کی دھری رہ جائیں گی کیونکہ عوام انکے کرتوں سے اچھی طرح واقف ہیں ۔ میری زندگی ایک کھلی کتاب کی مانند ہے جس کے بارے میں حلقہ کے عوام خصوصاََ نوجوان طبقہ بہت اچھی طرح سے آگاہ ہیں وہ انکی منفی، بے بنیاداور من گھڑت پراپیگنڈہ پر مشتمل الزام تراشیوں کے جھانسے میں نہیں آنے والے۔

راجہ زاہد عزیز نے سرکاری اراضی فروخت کرنے کے حوالے سے اپنے اوپر لگائے جانے والے الزام کے جواب میں کہا کہ جس موضع کے حوالے سے یہ من گھڑت قصہ بیان کیا گیا ہے اس میں تو کوئی سرکاری اراضی ہے ہی نہیں اور جس چوہدری ساجد نامی پٹواری کے ذکر کیا گیا ہے وہ گزشتہ 15برسوں سے اس موضع میں تعینات ہی نہیں ہوا۔ اس کے علاوہ میرا اس پٹواری سے کبھی کوئی واسطہ ہی نہیں رہا تو میں نے سرکاری اراضی اس کے ذریعے کیسے فروخت کردی۔ یہ سب عوام کو گمراہ کرکے میری کرداری کشی کرنے کی کوشش ہے۔

انہوں نے عزم ظاہر کیا کہ میں انشاء اللہ ان موروثی سیاستدانوں کی عوام کی جائیدادوں پر ناجائز قبضوں ، تھانے کچہری میں جھوٹے مقدمات اور ہرقسم کی بلیک میلنگ کے خلاف سیسہ پلائی دیوار ثابت ہونگا۔ابھی تو میں نے عملی سیاست میں قدم ہی رکھا ہے تو ان کو جو تکلیف ہورہی ہے وہ ان سے برداشت نہیں ہو پارہی آگے آگے دیکھئے ہوتا ہے کیا۔ انشاء اللہ میں اس رب العزت کی مدد ونصرت سے ان فرعونو ں کے ظلم سے عوام کو نجات دلا کے رہوں گا۔ میں انکی کسی دھمکی میں آنے والا نہیں ہوں۔ میں صرف اپنے رب سے مددکا طلبگار ہوں اور عوام سے اس قدر تعاون کا متمنی ہوں کہ آئیندہ الیکشن میں وہ کھوٹے او ر کھرے کی پہچان کرنا سیکھیں اور ظالم کا ہاتھ روکنے کے لئے حق وسچ کا ساتھ دیتے ہوئے اپنے لئے بہتر قیادت کو منتخب کریں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button