جہلم

ہائی کورٹ کے حکم پر ٹریفک پولیس جہلم کی کم عمر ڈرائیونگ کے خلاف سخت کارروائی، درجنوں چالان

جہلم: سب انسپکٹر ٹریفک پولیس ملک افتخار حسین سروبہ کی کم عمر ڈرائیونگ کے خلاف سخت کاروائی، درجنوں چالان ، کارروائی ہائی کورٹ کے احکامات پر ڈی پی او جہلم کی ہدایت پر جاری رہے گی، کاروائی کی نگرانی انچارج ٹریفک دفتر جہلم تسنیم کوثر کررہی ہیں۔

یہ بات سب انسپکٹر ٹریفک پولیس جہلم ملک افتخار حسین سروبہ نے کاروائی کرتے ہوئے کہی، انہوں نے بتایا کہ ہائی کورٹ کے فیصلے کے بعد کم عمر ڈرائیو ر ان کے خلاف سخت کاروائی کی جارہی ہے جس کے متعلق ڈی پی او جہلم اور انچارج ٹریفک پولیس کی سخت ہدایات جاری کی گئی ہیں۔

ملک افتخار سروبہ نے کہا کہ کم عمر بچوں کو موٹرسائیکل، رکشہ ، گاڑی چلانے کی ہر گز اجازت نہ دی جائے گی اور اس سلسلہ میں قانون کی خلاف ورزی کرنے پر نہ صرف کم عمر ڈرائیورز بلکہ ان کے والدین کے خلاف سخت کاروائی شروع کر دی گئی ہے ۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ پکڑے جانے والے بچوں کے والدین سے آئندہ یہ جرم نہ کرنے کا بیان حلفی لینے کا کوئی فائدہ نہیں ، شہری سو پچاس روپے کا جھوٹا بیان حلفی دے کر جان چھڑوا کردوسرے دن پھر معصوم بچوں کو گاڑیوں پر چڑھا دیتے ہیں اس لئے ضروری ہے کہ موٹر سائیکل رکشہ ، گاڑی چلانے والے بچوں کے والدین کے خلاف مقدمہ درج کرکے کم از کم دس دن جیل بھیجا جائے اور گاڑی بھی پندرہ دن کیلئے بند کی جائے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button