کھیوڑہ

کھیوڑہ میں پینے کے پانی کی غیرمنصفانہ تقسیم، موسم سرما میں بھی عوام پانی کو ترسنے لگے

پنڈدادنخان: کھیوڑہ سمیت شہر کے مظافات جس میں سر فہرست وارڈ نمبر 19 واڑہ بلند خان ہے میں پینے کے پانی کی غیر منصفانہ تقسیم موسم سرما میں بھی عوام پانی کو ترسنے لگے۔ بھا ری نذ رانوںکے عوض لا تعداد کنکشنو ں کی وجہ سے عوام تک پانی کی سپلائی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے ،شہر یو ں کو پانی کی سپلائی دینے کے لیے مین لائن سے دیئے گئے تمام کنکشن فوری ختم کیے جائیں ۔عوامی مطالبہ

تفصیلات کے مطابق کھیوڑہ شہر سمیت اس کے مظافاتی آبادی جس میں واڑہ بلند خان وارڈ نمبر 19سر فہرست ہے جس میں پانی کی غیر منصفانہ تقسیم سے عوام شدید پریشانی کا شکار ہیں، سال ہا سال سے اس علاقے کی عوام پانی جیسی بنیادی سہولت سے محروم ہیں ۔

پانی کی عدم دستیابی کی وجہ سے لوگ پینے کا پانی خرید کر پینے اور دوسری ضروریات کے لیے مختلف مقامات سے پانی لے کر آنے پر مجبور ہوچکے ہیں جبکہ دوسری جانب شہر بھر کو پانی سپلائی کی مین لائن سے مقامی انتظامیہ کی ملی بھگت اور سیاسی بنیادوں پر چہیتوں کو خوش کر نے کے لیے دیئے گئے سینکڑوں کنکشن رکھنے والے24 گھنٹے وافر پانی سے فیض یاب ہو رہے ہیں۔

شہر کو پانی فراہم کرنے والی مین لائن کو جگہ جگہ سے بھاری نذرانوں کے عوض کنکشن دیے جائیں گے تو عام عوام کا پانی کے لیے ذلیل ہو نا کوئی اہم بات نہیں ہے مین لائن سے دیئے گئے لا تعداد کنکشن پانی کی عوام تک سپلائی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔

ذرائع کے مطابق مقامی انتظامیہ کی ملی بھگت کے ساتھ ساتھ سیاسی بنیادوں پر دیے گئے مین لائن سے کنکشن گزشتہ ساٹھ سال سے کھیوڑہ کی غریب عوام کے لیے عذاب بنے ہوئے ہیں ۔

عوامی سماجی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر جہلم سمیت وزیر اعلی پنجاب سے سے اپیل کی ہے کہ فی ِالفور مین لائن کے تمام کنکشن بلا تفریق ختم کروائے جائیں اور پانی کی فروخت میں ملوث افراد کے خلاف بھی کارروائی کی جائے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button