جہلم

پی ڈی ایم چیئرمین سینٹ کے الیکشن کا فیصلہ عدالت میں چیلنج کرے گی۔ اشرف چغتائی

جہلم: چیئرمین سینیٹ کے انتخابات الیکشن کمیشن کے نہیں بلکہ سینٹ کے تحت تھے اور صدرِ پاکستان نے ایک ایسے شخص کو پریزائیڈنگ افسر منتخب کیا جو ان کا اتحادی تھا۔’’اس نے جو فیصلہ دیا اس کو پی ڈی ایم آج عدالت میں چیلنج کرے گی۔

ان خیالات کا اظہار پاکستان پیپلز پارٹی کے سینیر راہنما اشرف چغتائی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاہے کہ ہم نے وزیر اعظم کو ان کے اپنے حلقہ میں شکست دی۔ یہ صرف بلاول بھٹو زرداری، سید یوسف رضا گیلانی اور پاکستان پیپلز پارٹی کی نہیں بلکہ پی ڈی ایم اور اس میں موجود تمام جماعتوں کے اتحاد کی جیت ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے ہمیشہ جمہوریت کو اولین ترجیح دی ہے۔ ہم نے یہ جانتے ہوئے بھی کے انتخابات میں دھاندلی ہوگی، ہم نے انتخابات میں حصہ لیا کیونکہ نظام کی درستگی اور اداروں کا احترام ہمیشہ پاکستان پیپلز پارٹی نے کیا ہے۔

اشرف چغتائی نے کہا کہ تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ میں مشاورت ہورہی ہے، لیکن تمام تر شواہد کے ہوتے ہوئے ہمیں لگتا ہے کہ جلد از جلد عدالت سے رجوع کر کے اس غلطی کو درست کرنا ہے ہم سینیٹ چیئرمین کا انتخاب جیت چکے ہیں اور سید یوسف رضا گیلانی سینیٹ کے چیئرمین منتخب ہو چکے ہیں لیکن جو ناانصافی ہمارے ساتھ ہوئی ہے ہم نے آج اس کا مقابلہ عدالت میں کرنا ہے، انشاء اللہ عدالت سے ہمیں انصاف ملے گا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button