جہلماہم خبریں

ضلع جہلم میں لاک ڈاؤن پر عمل درآمد نہ ہوسکا، تاجروں کے دوکانوں کے باہر ڈیرے

جہلم: لاک ڈاؤن پر عمل درآمد نہ ہوسکا، تاجروں کے دوکانوں کے باہر ڈیرے، گاہک آنے پر شٹرکھول کر سامان فراہمی کے بعد دوبارہ بند ، کروڑوں کے کاروبار کرنے والے چند روز بھی لاک ڈاون برداشت نہ کر سکے، پولیس نے بھی چپ تان لی۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت کے حکم پر ملک بھر میں ایک ہفتہ کے جزوی لاک ڈاؤن کو بھی تاجر برداشت نہ کرسکے اور سارا دن دھوپ اور گرمی میں دوکانوں کے باہر ڈیرے ڈال کر بیٹھے رہتے ہیں، گاہک آنے پر چوری چھپے شٹر اٹھا سامان فراہم کرنے کے بعد دوبارہ بند کر دیتے ہیں جبکہ مقامی پولیس وہاں سے نظریں چرا کر گزر جاتی ہے۔

روزانہ لاکھوں روپے منافع کمانے والے تاجروں کی ہوس اس قدر بڑھ چکی ہے کہ وہ اپنی جان کی پرواہ کئے بغیر سخت گرمی میں دوکانوں کے باہر دن بھر بیٹھے رہتے ہیں اور لاک ڈاؤن کی کھلی خلاف ورزی کرتے ہیں۔ مین بازار، نیا بازار، شاندارچوک ، سول لائن ، قبرستان روڈ، محمدی چوک ، بلال ٹاؤن میں تقریبا ہر مارکیٹ کے باہر دوکانداروں نے ڈیرے لگائے ہوئے ہیں اور کروڑوں کے مالک گرمی میں ذلیل ہو رہے ہیں لیکن چند روز کاروبار بند کرنے کی ہمت نہیں رکھتے۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ جہلم شہر کے مضافاتی علاقوں کالا گجراں، سعیلہ، دینہ میں اکثریت مارکیٹیں کھلی ہیں سو روپے والی چیز پانچ چھ سو میں بھی فروخت کرکے ان تاجروں کے پیٹ نہیں بھرے تو قبر کی مٹی ہی ان کی ہوس پوری کرسکتی ہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button