سرکاری اداروں میں دوہرا معیار، افسر شاہی قائم، سکیل15 تک کے ملازمین الوداعی گرانٹ سے محروم

0

جہلم: ضلع بھر کے سرکاری اداروں میں دوہرا معیار، افسر شاہی قائم ،سکیل 1 تا 15 تک کے ملازمین ریٹائرمنٹ پر الوداعی گرانٹ سے محروم ،جبکہ سکیل 16 تا22 کے افسران کوالوداعی گرانٹ کے طور پر بہبود فنڈز سے ایک ماہ کی تنخواہ دی جاتی ہے ۔ سکیل 1 تا 15 تک کے ملازمین کی تنخواہوں سے بینوولنٹ فنڈ کی کٹوتی کا خاتمہ کیا جائے ۔

اس حوالے سے سرکاری اداروں سے ریٹائرڈ ہونے والے ملازمین کا کہنا ہے کہ پنجاب اور وفاقی حکومت نے فیڈرل ایمپلائز بینوولینٹ اینڈ گروپ انشورنس فنڈز کے نام سے 4 اپریل 1969ء کو حاضر سروس سرکاری ملازمین کی بہبود کے لیے ایک ادارہ قائم کیا جسے بینوولینٹ یا بہبود فنڈ کا نام دیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ اس فنڈ زکو وجود میں لانے کا بنیادی مقصد سرکاری ملازمین اور حکومت کے منظور شدہ خود مختار اداروں کے ملازمین کو بینوولینٹ گرانٹ، گروپ بیمہ اور دوسرے مالی فوائد فراہم کرنا تھا۔ اس فنڈ کے ذریعے ہر سرکاری ملازم کی تنخواہ میں سے3 فیصد رقم ہر ماہ منہا کر لی جاتی ہے جس میں گورنمنٹ ملازمین کی سروس کے ساتھ ساتھ بتدریج اضافہ ہوتا رہتا ہے۔

انہو ںنے کہا کہ دوران ملازمت سرکاری ملازمین سے خطیر رقم کی کٹوتی کی جاتی ہے اور بچوں کو نام نہاد سکالر شپ دی جاتی ہے جس سے اکثر ملازمین محروم رہتے ہیں انہوں نے کہا کہ بینوولنٹ فنڈز کا موجودہ طریقہ انتہائی غیر منصفانہ ہے ملازمین اپنے حق سے مکمل طور پر محروم ہیں۔

انہوں نے کہا کہ بینوولنٹ فنڈز کے موجودہ طریقہ کار کو تبدیل کر کے گروپ انشورنس اور جی پی فنڈ کی طرح ملازمین کوریٹائرمنٹ پر یکمشت رقم کی ادائیگی کی جائے ۔ ریٹائرڈ اور وفات پانے والے ملازمین کو بھی بینوولنٹ فنڈز سے امدادی رقوم دی جائیں ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.