جہلم

جہلم میں ناقص اور مضر صحت گوشت کی فروش، شہری مختلف موذی امراض میں مبتلا ہونے لگے

جہلم: شہر سمیت ضلع بھر میں قصابوں نے بڑی تعداد میں بیمار لاغر جانوروں کو سستے داموں خرید کرپانی ملا گوشت شہریوں کو مہنگے داموں فروخت کر رہے ہیں، شہری ناقص و مضر صحت گوشت کے استعمال سے مختلف موذی امراض میں مبتلا ہونے لگے، شہریوں نے ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی سے نوٹس لینے کا مطالبہ کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق شہر و گردونواح کے قصابوں نے لاغر، بیمار، نیم مردہ جانوروں کو سستے داموں خرید کر ناقص گوشت کو پانی لگا کر مہنگے داموں فروخت کرنا روزانہ کا معمول بنا لیا ہے، اندرون شہر میں قصابوں نے جالیاں لگائے بغیر گوشت کی فروخت جاری رکھے ہوئے ہیں۔

ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ بااثر قصاب لاغر، بیمار، نیم مردہ جانوروں کوانتہائی سستے داموں خرید کر گھروں میں لے آتے ہیں جہاں انہیں ذبح کرکے نالوں پر قائم دکانوں پر لٹکا کر فروخت کردیا جاتا ہے ، پنجاب فوڈ اتھارٹی کے ذمہ داران قصابوں کے خلاف کارروائی کرنے کی بجائے خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہے ہیں۔

شہر سے ملحقہ آبادیوں کے قصاب سلاٹر ہاؤس میں جانور ذبحہ کرنے کی بجائے گھروں میں جانور ذبحہ کرکے فروخت کر رہے ہیں جن کے استعمال سے شہری مہلک بیماریوں میں مبتلا ہورہے ہیں۔

شہریوں نے ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی سے مطالبہ کیا ہے کہ شہر کے گندے نالوں پر قائم دکانوں اور لاغر، بیمار، نیم مردہ جانوروں کا گوشت فروخت کرنے والے قصابوں کے خلاف سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے تاکہ شہر یوں کو حفظان صحت کے اصولوں کے عین مطابق گوشت فراہم ہو سکے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button