پنڈدادنخان

انتظامیہ کی مبینہ ملی بھگت، پنڈدادنخان میں مردہ اور لاغر جانوروں کا گوشت فروخت ہونے لگا

پنڈدادنخان میں مردہ اور لاغر جانوروں کا گوشت فروخت ہونے لگا ،انتظامیہ اور ویٹنری ڈاکٹروں کی نااہلی کے باعث چیک اینڈ بیلنس کے اقدامات نہ ہونے کے برابر عملہ دفاتر تک محدود ، انتظامیہ کی مبینہ ملی بھگت سے تحصیل پنڈدادنخان کے مختلف علاقوں میں بغیر تصدیق شدہ گوشت بیچنے والوں کی بڑی تعداد بیماریاں پھیلنے کا موجب بننے لگیں۔

تفصیلات کے تحصیل پنڈدادنخان میں قصاب بے لگام ہوگئے کھیوڑہ،پنڈدادنخان علاقہ تھل ،جالپ اور تحصیل پنڈدادنخان کے دیگر علاقوں میں مردہ اور لاغر جانوروں کا گوشت بکنے لگا جبکہ بھاری تنخواہیں وصول کرنے والے ویٹنری ڈاکٹر دفاتر تک محدود ہیں۔

ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ گوشت کی تصدیق کی نشاندہی کے لیے بنائی گئی مہریں مارکیٹ میں پرائیوٹ لوگ استعمال کرتے ہیں جبکہ اس سے قبل بھی پنڈدادنخان سلاٹر ہاوس میں حاملہ گائے ،بھنسیں اور بکریاں ذبح کرنے کے واقعات رونما ں ہوچکے ہیں لیکن انتظامیہ کی نااہلی یہ ہے کہ اس مسئلہ پر قابو پانے کے لیے کوئی موثر اقدامات نہیں کئے گئے، ویٹنری عملہ کی ملی بھگت سے تحصیل بھر میں لاغر جانوروں کا مہنگے داموں گوشت فروغ کیا جارہا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ انتظامیہ اور ویٹنری ڈاکٹر مک مکا کرتے ہیں تبھی ان عناصر کے خلاف کوئی موثر اقدامات نہیں کئے جاتے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button