ضلع جہلم کی چاروں تحصیلوں میں ٹمبر مافیا ء کے گروہ متحرک ، قد آور درخت غائب ہونے لگے

0

دینہ: ضلع جہلم کی چاروں تحصیلوں میں ٹمبر مافیا ء کے گروہ متحرک ، قد آور درخت غائب ہونے لگے۔جبکہ سرکاری جنگل کا وجود بھی شدید خطرات سے دوچار، سنگین صورتحال کے پیش نظر عوامی حلقوںنے حکومت پنجاب اور محکمہ جنگلات سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیاہے۔

تفصیلات کے مطابق ضلع جہلم کی تحصیل سوہاوہ ، تحصیل دینہ ، تحصیل جہلم ، تحصیل پنڈدادنخان میں پچھلے کئی سالوں سے ٹمبر مافیا ء کے گروہ متحرک ہیں جو سرکاری درختوں کو چوری کاٹ کر اسے فروخت کر رہے ہیں ، اکثر اوقات محکمہ جنگلات کے اہلکارشہریوں اور ارباب اختیار کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کیلئے سرکاری چوری شدہ لکڑی کے لوڈ ٹرک اور ٹرالیاں تحویل میں لیکر چند ہزار روپے جرمانہ کرکے سب اچھا ہے کا راگ آلاپ دیا جاتا ہے ۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ محکمہ جنگلات کے افسران و اہلکار اپنے عیبوں پر پردہ ڈالنے کے لئے ٹمبر مافیاکے خلاف معمولی جرنامہ کی وصولی کی رسید جاری کرتے ہیں ، ٹمبر مافیا کے خلاف کسی بھی تھانے میں مقدمہ درج نہیں کروایا جاتا ، اسی بنیادی وجہ سے مقدمات کا اندراج بھی نہیں کروایا جاتا جس کیوجہ سے درختوں کا بے دردی سے قتل عام جاری ہے ۔

آندھی اور طوفانی بارشوں کے موسم میں سڑکوں کے کنارے اور دیگر مقامات پر گرنے والے قد آور درخت بھی ٹمبر مافیا کے ہاتھوں فروخت کر دئیے جاتے ہیں جبکہ علاقہ کی بااثر شخصیات اپنے چیلوں اور نشہ کے عادی افراد مبینہ طور پر رات کی تاریکی میں سرسبز و شاداب درخت کاٹ کر اپنے گھروں میں منتقل کر لیتے ہیں۔

شہریوں نے اس سنگین صورتحال کے پیش نظر حکومت پنجاب اور محکمہ جنگلات کے افسران سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.