ڈومیلی

حلقہ کے دیرینہ مسائل کو حل کرنے کی بھرپور کوشش کر رہے ہیں۔ چوہدری فرخ الطاف

ڈومیلی کے علاقہ غازیوٹ میں پُل کی افتتاحی تقریب کا انعقاد کیاگیا، ایم این اے چوہدری فرخ الطاف اور ایم پی اے راجہ یاورکمال نے فیتہ کاٹ کر پُل کا افتتاح کیا، پل کو چوہدری الطاف حسین مرحوم کے نام سے منسوب کیاگیا۔دونوں لیڈران کا غازیوٹ پہنچنے پر شاندار استقبال کیاگیاپھول اور نوٹ نچھاورکئے گئے۔

ایم این اے چوہدری فرخ الطاف کا جلسہ گاہ پہنچے تک مردوخواتین اور بچوں نیراستے میں خوب استقبال کیا۔ خلیل الرحمن کی جانب سے کرائے جانے والے جلسہ میں چوہدری فرخ الطاف ایم این اے، ڈاکٹر فضل الحق فضلی فوکل پرسن، عامرنوازکیانی سابق چیئرمین یوسی اڈرانہ، ملک اشفاق سابق چیئرمین یوسی ججیال، مرزا جمشید سابق چیئرمین یوسی ڈومیلی سمیت دیگر علاقے کی سیاسی و سماجی شخصیات نے شرکت کی۔

تقریب سے ماسٹر چوہدری لیاقت حسین، قاضی خلیل الرحمن، پہلوان نعیم صدیق، ڈاکٹر سعد حیدر نے خطاب کرتے ہوئے ایم این اے اور ایم پی اے کا تہہ دل سے شکریہ ادا کیااور کہا کئی حکومتیں آئی لیکن ہمارے اس دیرینہ مسئلے کوکسی نے حل نہیں کیالیکن چوہدری فرخ الطاف کی خصوصی کاوش سے پل کی تعمیر مکمل ہوئی جو ہماری اولادیں گزریں گی اور یاد کریں گی، ہمارے پاس الفاظ نہیں کہ ہم ان کا کیسی شکریہ ادا کریں۔

ممبر قومی اسمبلی چوہدری فرخ الطاف نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ آپ لوگوں کی وجہ سے میں ایم این اے بنااور اللہ نے مجھے آپ کی خدمت کرنے کا موقع دیا، اس پل کے علاوہ بھی علاقے کے دیرینہ مسائل کو حل کرنے کی بھرپور کوشش کررہے ہیں۔گوڑہا پل کا بھی جلد افتتاح ہوگااور جس سے علاقے کی عوام کو دینہ جانے میں چند منٹ لگیں گے۔ہم اپنے ووٹروں سپورٹروں کو کبھی ناراض نہیں کریں گے۔

تقریب کے اختتام پر ایم این اے چوہدری فرخ الطاف نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے صحافی کے سوال پر کہا کہ سوہاوہ میں کالجز میں اساتذہ کی کمی کو پورا کرنے کی پوری کوشش کررہے ہیں، جلد مسئلہ حل ہوجائے گا۔ دیہی علاقے میں کافی سکولوں کی اپگریڈیشن ہوچکی ہے جس سے دوردراز جانے والے طلباء و طالبات کو انکے قریب سہولت میسر ہوگی۔

سوئی گیس کے مسئلے پرکہا پاکستان میں سوئی گیس کی پیداوار میں کافی کمی آگئی ہے جس کی وجہ سے دینہ اور سوہاوہ میں گیس منظور نہیں ہورہی۔ جیسے ہیں کوئی باہر سے گیس کا منصوبہ منظوری ہواتو پھر دینہ سوہاوہ میں بھی لگوائیں گے۔اس ڈومیلی کے دیہی علاقے کو ترقی دینا میرے لیے اولین ترجیح میں شامل ہیں۔پچھلے کئی سالوں سے اس علاقے کو ترقیاتی کاموں سے محروم رکھاگیا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button