جہلم

ضلع جہلم میں محکمہ وائلڈ لائف کے ذمہ داران غیر قانونی پرندوں کی فروخت نہ روک سکے

جہلم: وزیر جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب سید صمصام علی بخاری اور سیکرٹری جنگلات ، جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب شاہد زمان کی گرفت کمزور ہونے لگی ، ضلع جہلم میں محکمہ وائلڈ لائف کے ذمہ داران غیر قانونی پرندوں کی فروخت نہ روک سکے ۔

جہلم شہر سمیت ضلع بھر میں غیر قانونی پرندوں کا کارروبار وائلڈ لائف کے ذمہ داران کی سرپرستی میں عروج پکڑنے لگا، شہریوں نے وزیر جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب سید صمصام علی بخاری اور سیکرٹری جنگلات، جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب شاہد زمان سے نوٹس لینے اور بدعنوان افسران و اہلکاروں کو ضلع بدر کرنے کا مطالبہ کر دیا۔

محکمہ وائلڈ لائف کے ضلعی افسران کی سرپرستی میں نایاب نسل کے جانوروں اور پرندوں کا کارروبار جاری و ساری ہے ،محکمہ شکار کے افسران غیر قانونی کارروبار کی سرپرستی کرنے لگے، شہر سمیت ضلع بھر میں نایاب نسل کے جانوروں اور پرندوں کی فروخت کا کارروبار عروج پکڑ رہا ہے۔

شہریوں کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ محکمہ شکارکے کارندے مک مکا کرکے کارروبار کی سرپرستی کر رہے ہیں جس کی وجہ سے نایاب نسل کے جانور اور پرندے ختم ہو رہے ہیں جس کی وجہ سے جنگلوں کا حسن بھی تباہ ہو رہا ہے۔

شہریوں نے وزیر جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب سید صمصام علی بخاری اور سیکرٹری جنگلات، جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب شاہد زمان سے نوٹس لینے اور ضلعی ہیڈ کوارٹر پر کھلی کچہری لگانے کا مطالبہ کیاہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button