جہلم

ماہ رمضان کا تیسرا عشرہ شروع، ضلع جہلم میں فروٹ کی قیمتوں میں کمی نہ آسکی

جہلم: ماہ رمضان کا تیسرا عشرہ شروع، فروٹ کی قیمتوں میں کمی نہ آسکی،عید قریب آتے ہی مرغی کے گوشت کی قیمتیں بھی آسمان کو چھونے لگیں ، ایک دن مزید 15 روپے فی کلو اضافہ ۔ فروٹ منڈی میں پھلوں کی قیمتوں میں پہلے عشرے کی نسبت مزید تیزی آگئی۔

سستے بازاروں میں بھی فروٹ کی قیمتوں میں بھی غیر معمولی اضافہ ، کیلا، امرود، سیب، اسٹابری کی قیمتوں میں 20 سے 30روپے جبکہ لیموں، ادرک، لہسن کی قیمتوں میں بھی مزید اضافہ ہو گیا۔اسی طرح تربوز، خربوزہ کی قیمتیں میں 10 روپے فی کلو مزید اضافہ ہو گیا، عام بازار میں سستا رمضان بازار کی نسبت مہنگائی کم نہ ہوسکی۔

حکومت پنجاب نے رمضان سے قبل دعویٰ کیا تھا کہ بازاروں میں اشیاء خوردونوش کے نرخوں اور رمضان بازاروں میں معیاری اشیاء کم قیمتوں پر دستیاب ہونگی ۔ جو کہ محض دعوے کی حد تک ہی رہا، رمضان بازاروں میں دوم اور سوم اشیاء متعارف کروا کرکے قیمتوں میں معمولی کمی کے ساتھ فروخت کی جاتی رہی۔

رمضان بازاروں میں مادہ جانوروں کو ذبحہ کرکے گوشت فروخت کیا جاتا رہا جبکہ شہر کے بازاروں میں قصاب مضر صحت گوشت من مرضی کے نرخوں پر فروخت کرتے رہے ، ضلع بھرمیں درجنوں سرکاری افسران کو پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کے اختیارات سونپے گئے لیکن افسران ٹھنڈے کمروں کے اندر بیٹھ کر سب اچھا ہے کی رپورٹس بھجواتے رہے، ضلعی انتظامیہ بھی فوٹو سیشن تک محدود رہی ، شہر سمیت ملحقہ آبادیوں میں دکانداروں نے من مرضی کے نرخ مقرر کرکے شہریوں کی جیبوں کا صفایا کیا۔

شہریوں نے وزیراعلیٰ پنجاب سے شکوہ کرتے ہوئے کہا کہ انتظامیہ کی عدم دلچسپی کی وجہ سے حکومت کی شہرت کو نقصان پہنچ رہا ہے اگر حکمرانوں نے آنکھیں نہ کھولیں تو آمدہ عام انتخابات میں پی ٹی آئی کا وجود نظر نہیں آئے گا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button