محکمہ فاریسٹ کے کرپٹ ملازمین کی ملی بھگت سے سرکاری جنگلات کی بے دریغ کٹائی، حکام خاموش

0

پنڈدادنخان کے علاقہ جلالپورشریف میں تعینات محکمہ فاریسٹ کے ملازمین کو علی الصبح مقامی افراد نے غیر قانونی طور پر کٹائی کی گئی۔ لکڑی سے لوڈ ٹریکٹر ٹرالی بابت اطلاع دی گئی جو کہ گزشتہ رات جنگل سے لکڑی لوڈ کر کے لایا اور جلالپورشریف میں ایک ڈیرہ پر درختوں کے جھنڈ میں چھپا کر کھڑی کر دی۔

محکمہ فاریسٹ کے باکمال فاریسٹ گارڈز نے موقع پر پہنچ کر ٹریکٹر کے ڈرائیور کو فون کر کے بلایا اور ساز باز کر کے لکڑی سے لوڈ ٹرالی تحویل میں لینے کی بجائے موقع پر خالی کروا کر ٹریکٹر لیجانے کی اجازت دے دی۔ قابلِ ذکر بات یہ ہے کہ ایک جانب حکومت نے کلین اینڈ گرین،درخت لگاؤ مہم شروع کر رکھی ہے۔

دوسری جانب محکمہ فاریسٹ کے کرپٹ ملازمین نے چند ٹکوں کی خاطر سرسبز و شاداب جنگلات کی تباہی شروع کر رکھی ھے جس سے ہرے بھرے جنگلات میدانی علاقے کی منظر کشی کر رھے ہیں۔

علاقہ مکینوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب،سیکرٹری جنگلات اور ڈپٹی کمشنر جہلم سے مطالبہ کیا ہے کہ محکمہ فاریسٹ کے کرپٹ ملازمین کے خلاف اعلیٰ سطحی غیر جانبدارانہ انکوائری عمل میں لائی جائے اور حقائق واضح ہو جانے پر سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے اور سرکاری جنگلات کی غیر قانونی کٹائی کی روک تھام یقینی بنائی جائے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.