جہلم

صفائی ستھرائی کے نظام میں لاپرواہی اور مچھر مار سپرے نہ ہونے سے مچھروں کی افزائش نسل میں اضافہ

جہلم: شہرسمیت مضافاتی علاقوں میں مچھروں کی بہتات، صفائی ستھرائی کے نظام میں لاپرواہی اور مچھر مار سپرے نہ ہونے کے وجہ سے مچھروں کی افزائش نسل میں اضافہ، شہری وبائی امراض ملیریا ، خارش سمیت دیگر موذی امراض میں مبتلا ہونے لگے۔ عوامی و سماجی حلقوں کاڈپٹی کمشنر/ایڈمنسٹریٹرمیونسپل کارپوریشن سے مچھر مار سپرے کروانے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق سردی کے خاتمے کے بعد گرمی کا آغاز ہوتے ہی شہرسمیت مضافاتی علاقوں میں مچھروں کی افزائش نسل میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے ۔

اندرون شہر کے گلی محلوں مرکزی مقامات سمیت مضافاتی علاقوں میںموجود خالی پلاٹوں ، میدانوں میں گندگی و غلاظت کے ڈھیر اور بارشوں کیوجہ سے کھڑا ہونے والا گندہ پانی مچھروں کی افزائش نسل کی نرسریاں بن چکی ہیں، شہر کے گلی محلوں میں صفائی ستھرائی کی ابتر صورتحال کے باعث مچھروں کی افزائش نسل میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے ۔

شہریوں کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ ڈینگی مچھروں کی آگاہی کے لئے بڑے بڑے سیمینار ، واک وغیرہ کے اہتمام تو کئے جاتے رہے لیکن دوسری جانب گندگی غلاظت اور گندے پانی کی نکاسی کا کوئی معقول بندوبست نہیں کیا گیا،جس کیوجہ سے گلی محلوں میں گندگی کے ٹیلے لگے ہوئے ہیں جہاں کیڑوں مکوڑوں مکھیوں مچھروں کی افزائش نسل کے باعث چھوٹے چھوٹے معصوم بچے مہلک بیماریوں کا شکار ہورہے ہیں۔

شہریوں نے ڈپٹی کمشنر ، ایڈمنسٹریٹرمیونسپل کارپوریشن، چیف آفیسر میونسپل کارپور یشن سے مطالبہ کیا ہے کہ شہریوں کو مہلک امراض سے محفوظ بنانے کے لئے گندگی کے ڈھیروں سمیت گندے پانی کی نکاسی کا اہتمام کیا جائے تاکہ شہری بیماریوں سے محفوظ رہ سکیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button