دینہ

دینہ اورکالا گجراں میں گیس کی ری فلنگ اور کھلے پٹرول کی غیرقانونی ایجنسیوں کی بھرمار

دینہ: تھانہ منگلا ،چوکی سٹی دینہ ، تھانہ دینہ اور چوکی کالا گجراں کی حدود میں گیس ری فلنگ اور کھلے پٹرول کی غیر قانونی ایجنسیوں کی بھر مار ، انچارج اور محرران تک بھتہ باقاعدگی سے جانے کا انکشاف ، ڈی پی او جہلم اور انچارج سول ڈیفنس سے موت کے سوداگروں کے خلاف بھر پور کارروائی کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق تھانہ منگلا کے علاقے نکودر میں دو عدد ، رانجھا میرا ، بڈھاڑ، مغل آباد، اور چوکی سٹی دینہ کی حدود میں ریلوے روڈ پر سرے عام پٹرول کی فروخت جاری ہے جب کہ تھانہ دینہ کی حدود میں موٹا غربی ، باغاں ، کھوکھا، نٹائن ، بودلہ ، کے مقام پر سر عام کھلے پٹرول اور گیس ری فلنگ کا دھندہ عروج پر ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق ایس ایچ او حضرات نے اپنے ٹاؤٹ منتھلیاں اکٹھی کرنے کے لیے رکھے ہوئے ہیں، جو با قاعدگی سے ماہانہ بھتہ وصول کر کے ایس ایچ او حضرات تک پہنچاتے ہیں جس وجہ سے اب تک کوئی قابلِ ذکر کاروائی عمل میں نہ لائی جا سکی ہے۔

دریں اثنا میڈیا ٹیم نے چوکی کالاگجراں کی حدود میں واقع چک جمال روڈ کا دورہ کیا تو انکشاف ہوا کہ وہاں پر گیس اور پٹرول کی غیر قانونی فروخت ایک ہی دکان میں کی جارہی ہے ، اور یہ مافیا اتنا طاقتور ہے کہ کارروائی کرنے والے پولیس آفیسر کو تبدیل اور نوکری سے برطرف کروانے کا بھی دعوے دار ہے۔

عوامی حلقوں نے ڈی پی او جہلم عبدالغفار قیصرانی اور انچارج سول ڈیفنس چوہدری اشفاق گجر سے غیر قانونی گیس ری فلنگ اور پٹرول بیچنے والوں کے خلاف بھر پور کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button