تاجروں اور ذخیرہ اندوزوں کا گٹھ جوڑ، بجٹ منظور ہونے سے قبل ہی عوام کو دھڑلے سے لوٹا جانے لگا

0

جہلم: شہر و گردونواح میں بڑے تاجروں اور ذخیرہ اندوزوں کا گٹھ جوڑ بجٹ منظور ہونے سے قبل ہی عوام کو دھڑلے سے لوٹا جانے لگا ، شہری سراپا احتجاج ڈپٹی کمشنر جہلم سے نوٹس لینے کا مطالبہ ۔
تفصیلات کے مطابق بجٹ کی منظوری سے قبلے ہی مہنگائی کا سیلاب آ گیا، سگریٹ کی ڈبیہ پر 20 روپے زائد ، انرجی ڈرنک پر 10 روپے عام بوتل پر 5 روپے چینی فی کلو 5 روپے ، دال پر 15 روپے فی کلو صابن تیل پر 5 روپے فی ٹکیہ زائد وصولی جاری ، کھانے پینے کی تمام اشیاء پر بھی اضافی رقم وصول کی جارہی ہے ، بس ،ویگن کا ر ٹرک ہر ایک اپنی مرضی سے کرایہ وصول کر رہاہے۔
سرمایہ دار ذخیرہ اندوز کروڑ پتی سے ارب پتی بن گئے ہیں تاجروں اور ذخیرہ اندوزوں کے گوداموں ، بازاروں ، میں کروڑوں روپے کا مال جن میں چینی ، گھی ، دالیں اور سگریٹ وغیرہ سٹاک میں موجود ہیں مگر گاہک کو مال کی کمی کا بہانہ بنا کر لوٹا جارہاہے۔
شہریوں کا کہنا ہے کہ گوداموں میں موجود مال اگر باہر نکالا جائے تواشیاء خوردونوش کی قلت اور مہنگائی ختم ہو سکتی ہے، عوام نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے اپیل کی ہے کہ ضلعی انتظامیہ ، ذخیرہ اندوزوں اور تاجروں کے خلاف بلا تفریق کارروائی کرے تاکہ گراں فروشی کا خاتمہ ہو سکے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.