جہلم

ضلع جہلم میں بھٹہ خشت کے مالکان نے اینٹوں کے نرخوں میں خود ساختہ اضافہ کر دیا

جہلم: ضلع بھر میں بھٹہ خشت کے مالکان نے اینٹوں کے نرخوں میں خود ساختہ اضافہ کر دیا، نئے گھر ، عمارتیں وغیرہ تعمیر کروانے والے شہریوں کی چیخیں نکل گئیں ، ڈسٹرکٹ آفیسر انڈسٹری، پرائسسز، ویٹس اینڈ میئرمنٹس سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق ہوس زر کی لت میں مبتلا بھٹہ خشت ما لکان کی ہٹ دھرمی کے باعث اینٹوں و ٹائلوں کی قیمتیں آسمان پر جا پہنچیں ، اینٹوں کی قیمتوں میں غیر معمولی اضافہ ، متعلقہ ذمہ داران کی عدم دلچسپی سے شہری سراپا احتجاج ہیں۔

اس حوالے نئے گھر، کوٹھیاں ، بنگلے ، پلازے تعمیر کرنے والے شہریوں نے اخبار نویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ضلع جہلم میں متعلقہ محکمہ کے ذمہ داران کی عدم دلچسپی کے باعث بھٹہ خشت مالکان آئے روز اینٹوں کے نرخوں میں خود ساختہ اضافہ کرکے شہریوں کے مسائل میں اضافے کا باعث بن رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ضلع جہلم میں ریت ، مٹی ،پانی ،کوئلہ تمام اشیاء ضلع جہلم کے علاقوں میں وافر مقدار میں پائی جاتی ہیں جبکہ بھٹہ خشت مالکان نے لاہور ، اسلام آباد ، کراچی کے نرخ جہلم میں لاگو کر رکھے ہیں جو کہ نئی عمارتیں تعمیر کرنے والے شہریوں کے ساتھ سخت زیادتی ہے ، قانون نافذ کرنے والے اداروں کی عدم دلچسپی کیوجہ سے بھٹہ خشت مالکان نے فی ہزار اینٹ کے نرخوں میں ہزاروں روپے کا راتوں رات اضافہ کر دیا، لیکن قانون نافذ کرنے والے اداروں کی پُر اسرار خاموشی سوالیہ نشان بن چکی ہے ۔

شہریوں نے ڈسٹرکٹ آفیسر انڈسٹری، پرائسسز، ویٹس اینڈ میئرمنٹس ، ڈپٹی کمشنر سے مطالبہ کیاہے کہ ضلع جہلم میں موجود بھٹہ مالکان کو فی ہزار اینٹ کے سرکاری نرخوں پر فروخت کرنے کا پابند بنایا جائے تاکہ شہری تعمیر و مرمت کا کام جاری رکھ سکیں اور مزدوروں کے گھروں کے چولہے جلتے رہیں ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button