جہلماہم خبریں

جہلم میں کورونا وائرس کی تیسری لہر کے وار شدت اختیار کر گئے

جہلم: ضلع جہلم میں کورونا وائرس کی تیسری لہر کے وار شدت اختیار کر گئے، سمارٹ لاک ڈاؤن 28مارچ تک جاری رہنے کا امکان، کاروباری مراکز ہفتہ میں دو دن بند، ضلعی انتظامیہ کی جانب سے نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ضلع جہلم میں کورونا وائرس کی تیسری لہر کے وار جاری ہیں جس کو مد نظر رکھتے ہوئے این سی او سی اور حکومت پنجاب نے پنجاب بھر میں سمارٹ لاک ڈاؤن کا اعلان کر دیا ہے کیونکہ جہلم میں آج مزید 12 کورونا وائرس کے مثبت مریض رپورٹ ہوئے ہیں جس وجہ سے جہلم میں بھی سمارٹ لاک ڈاؤن کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے۔

نوٹیفکیشن پر عمل درآمد کروانے کے لیے میونسپل کارپوریشن کا عملہ شہر بھر میں اعلانات کر رہے ہیں یعنی تمام تاجر صبح 9 بجے سے شام 6 بجے تک کاروبار کھول سکیں گے اور ہفتہ اتوار کاروبار مکمل بند رہیں گے۔ صرف دودھ دہی، جنرل کریانہ سٹور،تندور، میڈیکل سٹورز،پنکچرز کی دکانیں ریستوران ہوٹل، بیکرز وغیرہ کھلے رہیں گے، اس سمارٹ لاک ڈاؤن کا اطلاق 28مارچ تک رہے گا۔

ذرائع کے مطابق کل تک اسکولز اور شادی ہالز مارکیز وغیرہ پر بھی پابندی عائد کی جا سکتی ہے کیونکہ ذرائع کے مطابق گزشتہ کئی روز سے نجی وسرکاری اسکولز کے بچے اور ٹیچرز میں کورونا وائرس کی مثبت رپورٹس آئیں ہیں جس پر ضلعی انتظامیہ غور کررہی ہے۔

عالمی صحت کے ادارے کے مطابق تیسری لہر انتہائی خطرناک ثابت ہو سکتی ہے، لہٰذا عوام الناس کو پہلے سے زیادہ احتیاط کی ضرورت ہے، سینیٹائیزر، ماسک، سماجی فاصلے اور ہجوم والی جگہوں میں جانے سے پرہیز کریں اپنے لیے اور اپنے پیاروں کے لیے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button