جہلم

ضلعی انتظامیہ کی کارروائیاں محض کاغذی کارروائیوں تک محدود، جہلم میں مہنگائی کا جن قابو نہ کیا جا سکا

جہلم: ضلعی انتظامیہ کی کارروائیاں محض کاغذی کارروائیوں تک محدود ،اندرون شہر میں مہنگائی کا جن قابو نہ کیا جا سکا۔
شہر کے گنجان آباد علاقوں میں پھلوں اور سبزیوں سمیت اشیائے خوردونوش کی قیمتیں آسمان کو پہنچ گئیں ، جبکہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس اور مارکیٹ کمیٹی کی کارروائیاں صرف پریس ریلیزوں ،بیان بازی اور فوٹو سیشن تک محدود ہو کر رہ گئیں ،گرانفروشوں کی گرفتاریوں کے دعووں کے باوجود صورتحال بہتر نہ ہو سکی۔
ضلع بھر میں قائم سبزی منڈیوں، بازاروں میں ٹماٹر 100روپے کے سرکاری نرخوں کی بجائے 140 روپے فی کلو، چائنہ لہسن 230 روپے کی بجائے250 روپے فی کلو، پیاز 65 روپے کے سرکاری نرخوں کی بجائے 80 روپے فی کلو فروخت ہوتارہا۔
مارکیٹ کمیٹی کی جانب سے جاری نرخ نامے میں بعض سبزیوں کا اندراج ہی نہیں کیا گیا۔اسی طرح کالا کلو سیب 145 روپے سرکاری نرخوں کی بجائے 180 سے 200 روپے فی کلو ، سفید سیب90 روپے کی بجائے 120 روپے فی کلو، فروٹر120 روپے فی درجن کی بجائے 150 روپے ، مسمی اور مالٹا150 روپے کی بجائے 180 میں فروخت ہوتا رہا۔
شہریوں کے مطابق مارکیٹ کمیٹی کی جانب سے سبزی و پھل فروشوں کو ریٹ لسٹیں دن 12 بجے کے بعد جاری کی جاتی ہیں جبکہ عوام اس وقت تک خریداری کر چکے ہوتے ہیں ، اسی طرح مارکیٹ کمیٹی اور ضلعی انتظامیہ کی ملی بھگت سے شہریوں کو دونوں ہاتھوں سے لوٹا جا رہاہے ، اس پر ستم ظریفی یہ ہے کہ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے شہر بھر میں ایسا کوئی شکایت سیل یا کاؤنٹر قائم نہیں کیا گیا جہاں کوئی صارف گرانفروشوں کے خلاف شکایت کر سکے۔
ڈپٹی کمشنر محمدسیف انور جپہ نے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کو ہدایات جاری کر رکھی ہیں کہ وہ مارکیٹ میں 20 کلو آٹے کے تھیلے اور چینی کی مقررہ کردہ سرکاری نرخوں پر دستیابی کو یقینی بنائیں اور سبزی پھلوں کی قیمتوں کے کنٹرول کے لئے منڈی میں ہونے والی بولی میں انتظامی افسران کی شرکت کو یقینی بناتے ہوئے انکے نرخوں کو مقررہ حد سے ہرگز تجاوز نہ کرنے دیں۔
انہوں نے کہا کہ ذخیرہ اندوزی کے ذریعے مصنوعی مہنگائی پیدا کرنے والوں کے ساتھ کسی قسم کی نرمی نہ برتی جائے اور صارفین کو ریلیف فراہم کرنے کے لئے تمام سٹورز پر قائم کئے گئے کا ؤنٹر پر اشیاء خوردونوش کے معیار اور ان کو سرکاری نرخوں پر فراہم کو یقینی بنایا جائے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button