کھیوڑہپنڈدادنخان

گورنمنٹ ہائی سکول کھیوڑہ تعلیمی ادارہ یا سیاست گاہ، سکول میں اساتذہ کی گروپ بندیاں عروج پر

کھیوڑہ: گورنمنٹ ہائی سکول کھیوڑہ تعلیمی ادارہ یا سیاست گاہ، سکول میں اساتذہ کی گروپ بندیاں عروج پر، ہیڈ ماسٹر کی عدم دلچسپی و ناقص ایڈمنسٹریشن ان کی مخصوص گروپ کو آشیرباد حاصل ہے، محمد اشرف ہیڈ ماسٹر کی سکول میں عدم دلچسپی کی وجہ سے طلباء کا مستقبل تاریک ہونے لگا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گورنمنٹ ہائی سکول ایک تاریخی سکول ہے اس سکول سے تعلیم حاصل کرنے والے طلباء الحمداللہ آج بھی ملک پاکستان میں سرکاری سطح و پرائیویٹ اداروں اور بیرونی ملکوں میں اعلی عہدوں پر فائز ہو کر سکول اور استاتذہ کا نام روشن کر رہے ہیں اور اسی تاریخی سکول کو اب ایک سو سال مکمل ہونے والے ہیں مگر افسوس کہ اس وقت سکول کے ہیڈ ماسٹر محمد اشرف ہیں جن کو سکول اور طلباء کے مستقبل سے کوئی دلچسپی نہیں ہے۔

سکول کا معیار دن بدن ڈاؤن ہوتا جا رہا ہے اور ناقص ایڈمنسٹریشن کی وجہ سے سکول کے حالات بہت خراب ہو رہے ہیں اگر کسی بھی بات کے لیے ہیڈ ماسٹر محمد اشرف سے موقف لینے کے لیے ان نمبرز 03009826810,03425125210 پر رابطہ کریں تو ہیڈ ماسٹر موقف دینا نہیں چاہتا۔

عوامی سماجی حلقوں نے کمشنر راولپنڈی ڈی سی جہلم سی او ایجوکیشن جہلم سے بھرپور مطالبہ کرتے ہیں کہ اس تاریخی سکول میں کوئی ذمہ دار ہیڈ ماسٹر تعینات کریں جو سکول ایڈمنسٹریشن کو کنٹرول کر کے سکول کے معیار کو بہتر سے بہتر بنا سکے۔

انہوں نے کہا کہ خدارا کمشنر راولپنڈی، ڈی سی جہلم، سی او ایجوکیشن جہلم فوری نوٹس لے کر سکول کی بگڑتی ہوئی صورت حال اور طلباء کامستقبل تباہ ہونے سے بچائیں اور کوئی ذمہ دار ہیڈ ماسٹر تعینات کریں جو استاتذہ کی گروپ بندی ختم کروائے اور تمام استاتذہ کے ساتھ برابری کی سطح پر روایہ اپنائے اور طلباء کی تعلیم و تربیت پر خصوصی توجہ دے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button