سوہاوہ

سوہاوہ کے نواحی علاقہ پڑی درویزہ میں نادرا کا 2 روزہ ’’شناختی کارڈ‘‘ کیمپ ختم ہو گیا

نواحی علاقہ پڑی درویزہ میں NADRAکا دو روزہ ’’شناختی کارڈ‘‘ کیمپ ختم ہو گیا ۔ 234افراد کے شناختی کارڈ ، ’’ب ‘‘فارم، تجدید اور نئے کارڈ کے کوائف جمع کیے گئے ۔

تفصیلات کے مطابق سماجی ادارہ ’’پودا پاکستان‘‘ اور ادارہ NADRAکے تعاون سے یونین کونسل پھلڑے سیداں کی حدود میں پانچ مقامات دئیوال، پڑی درویزہ، بلبل کلاں، پھلڑے سیداں اور سگیال میں نادرا کی موبائل رجسٹریشن وین کے زیر اہتمام شناختی کارڈ کے کیمپ لگائے جارہے ہیں ۔ اس سلسلے میں پہلادو روزہ کیمپ دئیوال میں منعقد کیا گیا ۔

دوسرا شناختی کارڈ موبائل کیمپ کیپٹن عطا اللہ خان سول ڈسپنسری پڑی درویزہ کے صحن میں منعقد کیا گیا ۔ اس دو روزا کیمپ کی میز بانی کے فرائض معروف صحافی سماجی کارکن پروفیسر افتخار محمودنے ہمراہ اپنے ساتھی سماجی کارکنان شاہد محمود مغل ، ملک محمد شفیق، ماسٹر محمد اکرم، حاجی امیر زمان اور طالب حسین زرگر نے انجام دیے ۔

16ستمبر بروز بد ھ کو کیمپ کے آغاز پر استقبالی گفتگو کے دوران پروفیسر افتخار محمود نے شرکاء کو بتایا کہ گزشتہ 20سالوں کے دوران پڑی درویزہ میں ادارہ ’’نادرا ‘‘ کا یہ تیسرا کیمپ ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ 21صدی کے پہلے دس سالوں کے دوران سابق جنرل کونسلر نمبردارراجہ خورشید حیدر اور امجد ظہیر کی رہائش گاہوں پر کیمپ منعقد ہو چکے ہیں ۔ موجودہ دو روزہ کیمپ کے دوران پڑی درویزہ اور گر د ونواح کی بیس سے زائد آبادیوں کی خواتین اور مردوں نے نئے شناختی کارڈ، تجدید اور’’ ب‘‘ فار م کے حصول کے لئے استفادہ کرنے کا موقع ملا ۔ دو دن میں 234افراد کے شناختی کارڈ کے مسائل حل ہوئے ۔

پڑی درویزہ کی سماجی شخصیات راجہ محمد شعیب اور نمبردار راجہ خورشید حیدر، اسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسر ناصر محمود بھی برابر شریک رہے کاغذات کی تصدیق کی سہولت بھی کیپ میں موجود تھی، یاد رہے کہ موبائل رجسٹریشن وین انتظامیہ انچارج شہباز خان ، مقبول حسین شاہ اور ایک ڈرائیور شامل تھے اسی طرح ادارہ ’’پودا ‘‘ ( پوٹھوہارمعاون ادارہ برائے سماجی ترقی) کی طرف سے سہیل یوسف اور محترمہ نسینہ خالد نمائندگی کر رہی تھیں ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button