ملکی حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے سکولوں کی سیکورٹی کا انتظام انتہائی ضروری ہونا چاہیے۔ ڈپٹی کمشنر سیف انور

0

دینہ: گورنمنٹ گرلز ہائیر سکینڈری سکول دینہ میں انتظامی امور کے متعلق ایک تقریب کا انعقاد ہوا جس کے مہمان خصوصی سیف انور چیمہ ڈپٹی کمشنر جہلم تھے ۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز سکول ہذا میں تعلیمی آفیسران کی انتظامی صلاحیتوں کے متعلق ایک پر وقار تقریب ہوئی۔اس تقریب میں ڈی۔ای۔او نرگس اکرام ڈپٹی ایجوکیشن آفیسر راؤ عبدالکریم ڈپٹی ایجو کیشن آفیسر زنانہ دینہ نیز تحصیل دینہ کے تمام سربراہان نے شرکت کی تقریب کا آغاز تلاوت قرآن پاک سے ہوا۔ اس کے بعد نعت شریف کا ہدیہ پیش کیا گیا۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر اسدندیم سی ۔ای۔او ایجوکیشن جہلم نے کہا کہ ڈپٹی کمشنر جہلم کی ہدایت پر روزانہ دفتری اوقات کار میں مڈل اور ہائی سکولوں کو چیک کیا جاتا ہے۔ ڈپٹی کمشنر جہلم بھی روزانہ ایک دو سکولوں کو چیک کرتے ہیں ۔ضرورت اس امر کی ہے کہ تعلیمی سال اختتام کے قریب ہے۔لہٰذا ٹیچرز اور سربراہ ادارہ کو 9th-10th کے طلبا پر خصوصی توجہ دیں۔ سکولوں کی بہتری کیلئے زونل ہیڈ بھی مقرر کئے جا چکے ہیں۔ لہٰذا قرب و جوار کے سکول زونل ہیڈ سے استفادہ کر سکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ٹیچرز کو چاہیے کہ وہ ماضی بعید کی طرح فرضی کاروائی کرنے سے پرہیز کریں اس حوالہ سے سربراہ ادارہ کا مثالی ہونا از حد ضروری ہے۔سربراہان ادارہ کو طلبا کے مفاد میں رخصت اتفاقیہ کی منظوری سے اجتناب کرنا چاہیے تھیوری کے ساتھ پریکٹیکل کا ہونا ضروری ہے لہٰذا سربراہ ادارہ کو چاہیے کہ وہ فزکس ،کمیسٹری اور بیالوجی کے پریکٹیکل اپنی نگرانی میں کروائیں۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے سیف انور چیمہ نے کہا کہ ملکی حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے سکولوں کی سیکورٹی کا انتظام انتہائی ضروری ہونا چاہیے تاکہ کوئی خوشگوار واقعہ نہ ہو وزیراعظم پاکستان اور وزیر اعلی پنجاب صفائی کی اہمیت پر زور دیتے ہیں۔ لہذا سکولوں کے اندر صفائی کا ہونا ازحد ضروری ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہر ادارہ کی چار دیواری اس طرح ہونی چاہیے کہ کوئی تخریب کار شیطانی حرکت نہ کرسکے۔ بعض لوگ سکولوں کی دیواروں پر اشتہار لگا دیتے ہیں ان کو ختم کرنا ہوگا سربراہ ادارہ کا مثالی اور با عمل ہونا کامیابی کی ضمانت ہے۔ سربراہ ادارہ کو چاہیے کہ وہ اساتذہ اور والدین سے قریبی رابطہ کرکے تدریس کے عمل میں بہتری لائیں طلبا کے مفاد میں ہوگا کہ اساتذہ ہفتہ وار ٹیسٹ لیا کریں۔

انہوں نے اس موقع پر شرکاء کا شکریہ ادا کیا اور امید ظاہر کی کہ دی گئی ہدایات پر اساتذہ اور سربراہ ادارہ توجہ دیں گے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.