پنڈدادنخاناہم خبریں

پنڈدادنخان کے شہری کا 15 سالہ بیٹا کیڈٹ کالج سے مبینہ طور پر اغواء

پنڈدادنخان کے نواحی علاقہ پننوال کے رہائشی کا15 سالہ بیٹا کیڈٹ کالج سے مبینہ طور پر اغواء، کالج انتظامیہ ہمیں اور ہماری خواتین کو بااثر شخصیات کے نام لیکر دھمکیاں دے رہی ہے۔ شہری کا الزام، چیف جسٹس پاکستان اور آئی جی پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق تحصیل پنڈدادنخان کے قصبہ پنن وال کے رہائشی محمد اشرف ولد حاکم خان محلہ آزاد پورہ نے بتایا کہ میرا بیٹا محسن علی جس کی عمر پندرہ سال ہے اور پری نہم کلاس کا طالب علم ہے اور کیڈٹ کالج کلر کہار میں زیر تعلیم ہے اور کالج کے اندر ہاسٹل میں ہی رہائش پذیر ہے۔

محمد اشرف نے بتایا کہ میرا بیٹا امیر حمزہ گھر چھٹیاں گزرانے آیا ہوا تھا اور اسے 9جنوری2022کو محسن علی بوقت بارہ بجے دن کیڈیٹ کالج کی انتظامیہ کے حوالے کر کے آیا تو ہمیں 10جنوری2022کو کالج کے نمبروں سے کال آئی جو کہ ڈاکٹر سجاد کے نمبر ہیں، انہوں نے کہا کہ آپ کا بیٹا کالج میں کہیں گم ہو گیا ہے۔

محمد اشرف نے الزام عائد کیا کہ ہمارے بیٹے کو کالج انتظامیہ کی ایماء پر کسی نامعلوم شخص یا اشخاص نے اغواء کر لیا ہے ہمارے بیٹے کو بازیاب کرایا جائے۔

دریں اثناتھانہ کلر کہار پولیس نے رپورٹ درج کر لی ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button