5 جولائی 1977ء کو آمر نے جمہوریت پر شب خون مار کر پاکستان مارشل لاء کی تاریکی میں ڈبویا، پیپلزپارٹی سوہاوہ

0

5جولائی 1977ء کو آمر جنرل ضیاء الحق نے جمہوریت پر شب خون مار کر وطن عزیز پاکستان کو طویل مارشل لا کی تاریکی میں ڈبو دیا ۔ پاکستان پیپلز پارٹی تحصیل سوہاوہ کا یوم احتجاج کے موقع پر مشترکہ بیانیہ ۔ تمام عہدیداران نے سیاہ پٹیاں بازوؤں پر باندھ کر احتجاج کیا میڈیا کے نمائندگان بھی موجود تھے ۔

تفصیلات کے مطابق آج سے 43سال قبل 5جولائی 1977ء کو وطن عزیز پاکستان میں چیئر مین پی پی پی اور سابق وزیر اعظم پاکستان ذوالفقار علی بھٹو شہید کی جمہوری حکومت کا تختہ الٹ کر اُس وقت کے آرمی چیف جنرل محمد ضیاء الحق نے ملک میں مارشل لا نافذ کر دیا تھا ۔ اس سانحہ کی یاد میں پاکستان پیپلز پارٹی تحصیل سوہاوہ کی طرف سے یوم احتجاج کے طور پر منایا گیا ۔

یوم احتجاج کے موقع پر پاکستان پیپلز پارٹی تحصیل سوہاوہ کے دفتر میں ایک تقریب منعقد کی گئی جس کی صدارت پی پی پی تحصیل سوہاوہ کے صدر اور سابق امیدوار برائے ایم پی اے حلقہ پی پی 25سوہاوہ مرزا عبدالغفار نے کی ۔ اس موقع پر تمام شرکاء نے احتجاج کے طور بازوؤں پر سیاہ پٹیاں باندھیں۔

یو م احتجاج کے موقع پر پاکستان پیپلز پارٹی تحصیل سوہاوہ کے صدر مرزا عبدالغفار کے علاوہ سینئر نائب صدر پی پی پی تحصیل سوہاوہ راجہ محمدتاج ، نائب صدر پی پی پی تحصیل سوہاوہ سید امجد بخاری ، جنرل سیکریٹری پی پی پی تحصیل سوہاوہ شیخ انیس احمد ،صدر ٹاؤن کمیٹی پی پی پی سوہاوہ شوکت علی اور جنرل سیکریٹری پی پی پی ٹاؤن کمیٹی سوہاوہ خالد محمود جنجوعہ موجود تھے ۔

تمام شرکاء کی طرف سے یوم احتجاج کے سلسلے میں ایک مشترکہ بیانیہ جاری کیا گیا جس میں 05جولائی 1977ء کے دن کو پاکستان کی سیاسی تاریخ میں یوم مارشل لا قرار دیا گیا ۔

بیانیہ میں مزید کہا گیا ہے کہ 05جولائی 1977ء کو اُس وقت کے آمر آرمی چیف جنرل محمد ضیاء الحق نے ایک منتخب وزیر اعظم پاکستان پیپلز پارٹی کے بانی و چیئر مین ذوالفقار علی بھٹو شہید کی حکومت پر شب خون مارتے ہوئے ملک کو طویل مارشل کی تاریک رات کے اندھیروں میں ڈبو دیا اور ملک گیارہ سال تک مارشل لا کے مہیب سایوں میں ڈوبارہا جمہوریت کا سفر بری طرح متاثر ہوا جو رہتی دنیا تک یاد رکھا جا ئے گا ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.