جہلم

میونسپل کمیٹی جہلم کے سپروائزروں کی ناقص کارکردگی، شہر اورملحقہ آبادیوں کے ماحول کو یکسر آلودہ کر دیاگیا

جہلم: میونسپل کمیٹی کے سپروائزروں کی ناقص کارکردگی، شہر اورملحقہ آبادیوں کے ماحول کو یکسر آلودہ کر دیاگیا، جا بجا گندگی کوڑے کرکٹ کے ڈھیر ،شہر کے تمام گلی محلوں کی عدم صفائی ، خاکروب غائب ، چیئرمین میونسپل کمیٹی نے بھی سینٹیشن برانچ کے سامنے ہتھیار پھینک دیئے ، شہر کی حالت زار کوڑا دان میں تبدیل ہوگئی ، دریائے جہلم اور جی ٹی روڈ کے کناروں پر کوڑا پھینکنے کی مہم نے سارے ماحول کو آلودہ کر دیا۔
تفصیلات کے مطابق میونسپل کمیٹی جہلم میں کوڑے کرکٹ کا جن بے قابو ہو گیا، شہری آبادیوں سمیت تمام گلی محلے کوڑے کرکٹ کی لپیٹ میں ، سینٹری ورکروں کو سپرائزروں نے پرائیویٹ کاموں پر لگا دیا جبکہ سینٹری ورکروں کے علاقے خاکروبوں کو ٹھیکے پر دے دیئے ، کوڑا کنڈی شہر کی پہچان بن کر رہ گیا ، رواں سال سے شہر کا حلیہ بگاڑ کر رکھ دیا گیاہے۔
عوامی نمائندے شہریوں کو صاف ستھر ا ماحول فراہم کرنے میں بری طرح ناکام ہو چکے ہیں ، جبکہ میونسپل کمیٹی کے ذمہ داران نے یہ کہہ کر اپنی جان چھڑارکھی ہے کہ سینٹیشن برانچ میں تعینات سینٹری ورکروں کو شہر کی وارڈز میں تقسیم کر دیا گیاہے ۔ جس کی تمام تر ذمہ داری کونسلرز پر عائد ہوتی ہے ۔ اور اگر کسی گلی محلے کے علاقہ مکین میونسپل کمیٹی صفائی ستھرائی کے حوالے سے رجوع کریں تو سینٹیشن برانچ میں موجود عملہ شہریوں کو لالی پاپ دیکر ٹرخا دیتا ہے ۔
قابل ذکر بات یہ ہے کہ شہر کے بازار جن میں مرغی بازار، نیا بازار ،چوک گنبد والی مسجد، گورنمنٹ گرلز ہائی سکول نمبر1 ، پرانا تھانہ سول لائن ، بلال ٹاؤن، چشتیاں محلہ ، اسلام پورہ ، مجاہد آباد، جادہ ، کریم پورہ، پروفیسر کالونی ، آفیسر کالونی ، گلزاری کالونی ، گلشن ٹاؤن سمیت دیگر ملحقہ آبادیوں میں گندگی کے ڈھیر لگے ہوئے ہیں ، جبکہ کشمیر کالونی ، کالا گجراں ، روہتاس روڈ ، قیصر آباد سمیت دیگر آبادیوں میں سینٹری ورکر صفائی ستھرائی کے لئے جانا گناہ کبیرہ سمجھتے ہیں۔
شہریوں کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ اندرون شہر کے گلی محلوں اور ملحقہ آبادیوں میں خاکروب کام چھوڑ کر اپنے کارندوں کے حوالے گلیاں محلے کر چکے ہیں ۔ جن سے سینٹری سپروائزر حصہ بقدر جثہ وصول کرکے شہریوں کو بیماریوں میں دھکیل رہے ہیں۔
شہریوں نے کمشنر راولپنڈی ، ڈپٹی کمشنر جہلم سے مطالبہ کیاہے کہ میونسپل کمیٹی جہلم کی سینٹیشن برانچ میں فرض شناس ایماندار سپروائزر اور چیف سینٹری آفیسر تعینات کیا جائے تاکہ شہر کو کچراہ کنڈی بننے سے محفوظ بنایا جاسکے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button