دینہ

ہمارا ملک دنیا کا خوبصورت ترین ملک ہے او ر اللہ کریم نے ہر نعمت سے نوازا ہے۔ امیر عبدالقدیر اعوان

دینہ: تصوف و سلوک اور یہ کیفیات قلبی بندے کے نہاں خانہ دل میں یہ احساس پیدا کرتے ہیںکہ وہ ہر وقت اس دھیان میں رہے کہ اس سے کوئی ایسا عمل نہ ہو جائے جو اللہ کریم کی ناراضگی کا سبب بن جائے۔

ان خیالات کا اظہار شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ امیر عبدالقدیر اعوان نے 40 روزہ روحانی تربیتی اجتماع کے اختتام کے موقع پر ہزاروں خواتین و حضرات سے خطاب کرتے ہوئے کیا ،انہوں نے کہا کہ یہاں دارالعرفان منارہ میں شب و روز ہر آنے والے سائلین پر یہ محنت کی جاتی ہے کہ ان کے دل کی زمین نرم ہو جائے اور پھر اللہ کی رضا کی وہ تڑپ پیدا ہو جائے جو نیکی کرنے پر مجبور کر دے ،دنیا کی حقیقت جب بندہ پر کھلتی ہے تو پھر یہ احساس ہوتا ہے کہ میں اللہ اور رسول ﷺ کے لیے کیا قربان کروں،پھر اس کے راستے کی دنیاوی ضروریات اور رکاوٹیں نہیں آتیں۔

انہوں نے کہا کہ آج ہمارے معاشرے میں لوگ حج بھی رہے ہیں رمضان کے روزے بھی رکھ رہے ہیں لیکن معاشرے میں خرابی پھر بھی ہے ،کمزوری کے پہلو موجود ہیں تو اس کا ایک ہی حل ہے کہ ہم اپنے ہر عمل کو خالص اللہ کی رضا پر لے آئیں اور ایسا تب ممکن ہے جب ہمارا دل ذکر قلبی سے منور ہو گا اور یہ دولت صحابہ کرام ؓ کے بعد سینہ بہ سینہ آتی ہوئی آج ہم تک پہنچی ہے ہمیں صرف اپنے آپ کو پیش کرنا ہے۔

آخر میں انہوں نے کہاکہ ہمارا ملک دنیا کا خوبصورت ترین ملک ہے او ر اللہ کریم نے ہر نعمت سے نوازا ہے ،ہمارے بڑو ں نے قربانیاں دیں کہ اس خطہ زمین پر اللہ کی حکومت ہونبی کریم ﷺ کا دیا ہوا نظام ہو اور اسلام کی بہاریں ہوں ،ہمیں چاہیے کہ وطن عزیز کی بہتری کے لیے اپنا کردار اداکریں،ملکی سلامتی اور بقا کی اجتماعی دعا فرمائی ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button