جہلم

سسرال اور شوہروں کے نارواسلوک سے تنگ درجنوں خواتین نے فیملی عدالتوں سے رجوع کر لیا

جہلم: سسرال اور شوہروں کے نارواسلوک سے تنگ درجنوں خواتین اپنے حقوق حاصل کرنے کے لئے فیملی عدالتوں سے رجوع کرتے ہوئے تنسیخ نکاح، سامان جہیز و حق مہر واپسی اور خرچہ نان و نفقہ کے لئے الگ الگ دعوے دائر کر دیئے جبکہ روٹھ کر جانے والے بیویوں کو منانے کے لئے نصب درجن سے زائد مردوں نے بھی آبادکاری کے دعوے دائر کر رکھے ہیں۔

رواں سال کے 8 ماہ میں درجنوں خواتین نے اپنے حقوق کے سلسلہ میں فیملی عدالتوں سے رجوع کر رکھا ہے جنہوں نے الگ الگ حق مہر واپسی ، سامان جہیز واپسی اور شوہروں کی طرف سے خرچہ ادا نہ کرنے پر دعوے دائرکر رکھے ہیں اور اپنے شوہروں سے علیحدگی اختیار کرنے کے لئے تنسیخ نکاح کے دعوے دائر کئے ہیں، فیملی عدالتوں سے خواتین نے استدعا کی کہ داد رسی کرتے ہوئے انصاف فراہم کیا جائے۔

ادھر نصف درجن سے زائد ایسے مردوں نے اپنے اپنے الگ الگ دعوے دائر کررکھے ہیں کہ ہم آبادکاری چاہتے ہیں ہماری بیویاں اپنے گھروں کو آباد کریں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button