جہلم شہر و گردونواح میں دیسی ادویات کے نام پر موذی امراض پھیلانے کا دھندہ عروج پر

0

جہلم: شہر و گردونواح میں دیسی ادویات کے نام پر موذی امراض پھیلانے کا دھندہ عروج پر۔ ہربل ادویات بنانے والے منی کارخانوں میں ادویات کی چیکنگ کے لئے کوئی لیبارٹری ہے اور نہ ہی حفظان صحت کے اصولوں کا خیال رکھا جاتا ہے ، متعلقہ ادارے بھی عوام کے جان و مال سے کھیلنے والوں کا تحفظ کرنے میں مصروف نظر آتے ہیں۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ مختلف قسم کی ادویات کھلے عام نیم حکیموں کی دکانوں پر فروخت ہو رہی ہیں ، جبکہ بسوں،ویگنوں میں ان ادویات کی فروختگی کا دھندہ کرنیوالے سارا دن سادہ لوح افراد کو بیوقوف بناتے اور مال بٹورتے نظر آتے ہیں ۔

یہ امر بھی دلچسپ ہے کہ انسانی قوت بڑھانے والی ادویات بھی حکماء سرعام فروخت کر رہے ہیں جو گردوں کے فیل ہونے کا موجب بنتی ہیں ،ان کی روک تھام کے لئے بھی کسی قسم کی کارروائی نہیں کی جارہی جس سے نوجوانوں کی بڑی تعداد بیماریوں کا شکار ہو رہی ہے۔

شہریوں نے ڈپٹی کمشنر جہلم سے استدعا کی ہے کہ وہ غیر رجسٹرڈ اور غیر معیاری ادویات فروخت کرنیوالے شہر اور مضافاتی علاقوں میں موجود حکیموں کیخلاف سخت کارروائی کرنے کے احکامات جاری کریں تاکہ شہریوں کو موذی امراض سے بچایا جا سکے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.