جہلم

دارالامان کے قیام کا مقصد خواتین کو محفوظ پناہ فراہم کرنا ہے۔ ڈاکٹر شہزانہ امتیاز

جہلم: ڈاکٹر شہزانہ امتیاز کی سربراہی میں دارلامان جہلم کا اجلاس منعقد ہوا جس میں عہدیدران اورتمام ممبران نے بھر پور شرکت کی۔ میٹنگ کی ابتداء قرآنِ پاک کی تلاوت سے ہوئی۔

طیبہ ناصر سپرنٹنڈنٹ دارالامان نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ محکمہ سوشل ویلفیئر اینڈ بیت المال اس بات پر زور دے رہے ہیں کہ ایڈوائزری کمیٹی کے عہدیداران اور مخیر حضرات کے تعاون سے ادارے میں مقیم خواتین کو محکمہ کے منظور شدہ مینیو کے مطابق غذا فراہم کی جائے ۔

اس موقع پر ڈاکٹر شہزانہ امتیاز نے ادارے میں مقیم خواتین میں کپڑے اور کھانے پینے کا سامان بھی پیش کیا۔ واجد حسین چوہدری ڈپٹی ڈائریکٹر سوشل ویلفیئرڈیپارٹمنٹ ، فرحت کمال ضیاء ایڈووکیٹ ، چوہدری سہیل احمد،شاہدہ شاہ اور رشیدہ عزیز نے کھانے کا سامان فراہم کرنے کا اعلان کیا۔ جنرل سیکریٹری الرحمت ویلفیئر سوسائٹی طارق مغل نے عید کے تحائف دینے کا عزم کیا۔ طیبہ ناصر اور محمد شفیق نے میٹنگ میں مسائل اور ان کے حل کے لئے ادارے کی کاوشوں کو سراہا۔

ڈاکٹر شہزانہ امتیاز نے کہا کہ لڑکیوں کو اپنی مرضی سے اپنی زندگی بسر کرنے سے روکنا ان کی نہ صرف انسانی حقوق کی نفی کرتا ہے بلکہ ان کو ایسے حالات میں دھکیل دیتا ہے جو ان کے لئے زیادہ نقصان کا باعث بنتے ہیں۔زبردستی کی شادی جو ایک لڑکی کے لئے اذیت کاباعث بن سکتی ہے۔یازبردستی کی وجہ سے بیٹی گھر چھوڑنے پر مجبور ہو جاتی ہے اور خاندان کا سہارہ کھو بیٹھتی ہے اور دارالامان کے قیام کا مقصد ان خواتین کو محفوظ پناہ فراہم کرنا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ بہت افسوس کے ساتھ یہ کہنا پڑتا ہے ایسی خواتین کے پیچھے کہیں نہ کہیں والدین کی عدم توجہی کا کردار ہے ۔ ہم سب کو عوام میں آگاہی پیدا کرنے کی ضرورت ہے کہ ہم اپنے بچوں کی پرورش اسلامی اقدار کی روشنی میں کریں اور اغیار مذاہب کی بے راہ روی کو رد کریں۔

ڈسٹرکٹ آفیسر سوشل ویلفیئرڈیپارٹمنٹ ،واجد حسین نے اس موقع پر شکایات بکس کھولا جس میں کسی قسم کی کوئی شکایت نہ ملی۔جس پر چیئر مین نے اطمینان کا اظہار کیا اور سٹاف سمیت سپرنٹنڈنٹ کی خدمات کو سراہا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button