جہلم

جہلم میں بارش کے پانی کی نکاسی نہ ہونے سے علاقے جوہڑوں میں تبدیل ہو کر رہ گئے

جہلم: شہر سے ملحقہ علاقوں میں بارش کے پانی کی نکاسی نہ ہونے سے علاقے جوہڑوں میں تبدیل ہو کر رہ گئے ،شہر آنے والے شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ، میونسپل کارپوریشن کا عملہ دفتروں میں بیٹھ کر تمام مسائل کو فائلوں میں حل کرنے میں مصروف ،ضلعی انتظامیہ بھی عملہ کے ہاتھوں بے بس۔
تفصیلات کے مطابق شہر کی اہم سڑکوں کوٹوٹے ہوئے کئی سال سے زائد کا عرصہ گزرچکا ہے سابق حکومت نے بھی شہریوں کے مسائل پر کسی قسم کی توجہ نہیں دی جس کیوجہ سے اندرون شہر سمیت ملحقہ آبادیوں کی سڑکیں گڑھوں میں تبدیل ہوچکی ہیں ، ان سڑکوں پر شہر کی 50 فیصد سے زائد چھوٹی بڑی گاڑیوں کا گزرنا روزانہ کا معمول ہے۔
شہر کی سڑکوں سے گزرنے والے مرد ، خواتین ، بچے اور بوڑھے افرادگاڑیوں سمیت موٹر سائیکلوں پر سفر کرتے دکھائی دیتے ہیں سڑکوں پر بننے والے گڑھوں کیوجہ سے قیمتی گاڑیاں ، موٹر سائیکلیں کھٹارا بنتی جارہی ہیں جبکہ بارشوں کے دنوں میں سڑکوں میں بننے والے گڑھوں میں کئی کئی فٹ پانی جمع ہو جاتا ہے۔
دوسرے اضلاع سے آنے والے ڈرائیورز لاعلمی کیوجہ سے ان گڑھوں میں گر کر گاڑیوں کا بھاری نقصان کر لیتے ہیں جبکہ موٹر سائیکل سوار گڑھوں میں گرنے کے باعث شدید زخمی ہو جاتے ہیں۔
شہریوں کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ میونسپل کارپوریشن کا عملہ سڑکوں پر کھڑا ہونے والے پانی اور کیچڑ کو ٹھکانے لگانے کی بجائے دفتروں میں بیٹھ کر سب اچھا ہے کہ راگ آلاپتے ہیں جس کا نقصان شہریوں کو برداشت کرنا پڑتا ہے۔
شہریوں نے ڈپٹی کمشنر جہلم سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button