میونسپل کمیٹی یا موٹروے پولیس کی غفلت؟ دینہ میں جی ٹی روڈ پر تین گاڑیاں آپس میں ٹکرا گئیں

0

دینہ: میونسپل کمیٹی دینہ یا موٹروے عملہ کی غفلت؟ جی ٹی روڈ پر تین گاڑیاں آپس میں ٹکرا گئیں، جانی نقصان سے محفوظ، ہزاروں روپے کا مالی نقصان، ذمہ دار کون؟۔

تفصیلات کے مطابق جمعرات کی صبح میونسپل کمیٹی دینہ کا عملہ جی ٹی روڈ گرین بیلٹ پر لگائے گئے پودوں کو رکشے میں ٹینک رکھ کر پائپ کے ذریعے پانی دے رہا تھا۔ جی ٹی روڈ پر گزرنے والی ٹریفک کو کسی بھی ممکنہ حادثے سے بچانے کے لئے نہ تو میونسپل کمیٹی دینہ کے عملے اور نہ ہی موٹروے کی جانب سے کوئی حفاظتی اقدامات کئے گئے تھے۔

ایک کار سوار نے مذکورہ رکشہ سے بچنے کی کوشش میں اچانک بریک لگائی جس کی وجہ سے پیچھے سے آنے والی دو گاڑیاں اس کار سے اور آپس میں ٹکرا گئیں۔ میونسپل کمیٹی دینہ کے عملے کے انوکھے انداز سے پودوں کو پانی دینے اور موٹر وے کی غفلت سے تین گاڑیاں آپس میں ٹکرا گئیں۔ تینوں گاڑیوں کے ٹکراو سے خوش قسمتی سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

ایک کار میں تحصیل پریس کلب سوہاوہ کے انفارمیشن سیکریٹری سید علی اپنی فیملی کے ہمراہ سوار تھے۔ انکی فیملی کی ایک خاتون کو معمولی چوٹیں آئیں جنہیں رورل ہیلتھ سنٹر دینہ میں طبی امداد دی گئی۔ تاہم تینوں گاڑیوں کے مالکان کو بھاری مالی نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

حادثہ ہو جانے کے باوجود بھی کافی دیر تک موٹروے کا عملہ جائے حادثہ پر نہ پہنچا۔ جی ٹی روڈ پر امدادی سروس کے لیے مخصوص نمبر 130 پر بھی بار بار کوشش کرنے کے باوجود رابطہ نہیں ہو پارہا تھا۔ یہ حادثہ کس کی غفلت کا نتیجہ ہے، میونسپل کمیٹی دینہ یا موٹروے، ذمہ داروں کا تعین کون کرے گا؟۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.