جہلم

جماعت پنجم کے امتحانات کے پرچے بچوں کی ذہنی سطح سے بہت اوپر ہیں۔ چودھری راشد محمود

جہلم: پنجاب ایگزامنیشن کمیشن کے تحت ہونے والے جماعت پنجم کے امتحانات کے پرچے بچوں کی ذہنی سطح سے بہت اوپر ہیں۔جس کی وجہ سے نہ صرف طلبا و طالبات پریشانی کا شکار ہو گئے ہیں بلکہ ان کے والدین کو بھی شدیدخدشات لاحق ہو گئے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار پنجاب ٹیچرز یونین جہلم کے ضلعی صدر چودھری راشد محمود نے کیا ۔ان کا کہنا تھا کہ بچوں کی ذہنی سطح سے اوپر پرچے بنانا اور امتحانات کے فوری بعد نتائج سے پہلے ہی بچوں کو اگلی جماعتوں میں بٹھانے کا مقصد یہی دکھائی دیتا ہے کہ بچے تو فیل ہونے کے باوجود اگلی جماعتوں میں ترقی پا جائیں مگر خراب نتائج پر اساتذہ کو سزائیں دی جائیں اور انھیں ذہنی اذیت کا نشانہ بنایا جائے۔

انھوں نے مزید کہا کہ پنجاب ایگزامینیشن کے پرچہ جات ان اساتذہ سے بنوائے جانے چاہیں جو پرچہ بنانے کے اصولوں سے واقفیت کے ساتھ ساتھ زمینی حقائق سے بھی آگاہ ہوں۔کیونکہ جو لوگ یہ پرچہ جات بنا رہے ہیں وہ ان زمینی حقائق سے آگاہ نہیں ہوتے ۔اس لیے وزیر اعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کرتے ہیں کہ پنجاب ایگزامنیشن کمیشن کے تحت ہونے والے امتحانات میں موجود خامیوں کو فوری طور پر دور کیا جائے کیونکہ طلبا وطالبات اور اساتذہ کی کارکردگی جانچنے کا واحد ذریعہ امتحانات ہوتے ہیں اور اگر وہ خامیوں سے بھرپور ہوں گے تو مطلوبہ مقاصد کا حصول ناممکن ہو جائے گا ۔جس کی وجہ سے وزیر اعلیٰ پنجاب کا پڑھو پنجاب ،بڑھو پنجاب کا خواب کبھی پورا نہ ہوپائے گا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button