کوئی بھی ملک 100 فیصد خواندگی کی شرح کو یقینی بنائے بغیر ترقی کی مکمل منازل نہیں طے کر سکتا۔ جہانزیب اعوان

0

جہلم: کوئی بھی ملک 100 فیصد خواندگی کی شرح کو یقینی بنائے بغیر ترقی کی مکمل منازل نہیں طے کر سکتا۔حکومت پنجاب نے شرح خواندگی میں خاطر خواہ اضافہ کرنے کیلئے لٹریسی اینڈ نان فارمل بیسک ایجوکیشن کا محکمہ بنایا ہے جس کے تحت ضلع جہلم میں 394 تعلیمی مراکز قائم کئے گے ہیں جہاں تعلیم سے محروم سینکڑوں بچوں کو علم کے زیور اراستہ کیا جا رہاہے ۔ حکومت پنجاب کی ہدایت پر بھٹوں پر کام کرنے والے بچوں کی بھی مفت تعلیم کا اہتمام کیا گیاہے ۔

ان خیالات کا اظہار ڈپٹی کمشنر جہلم محمد جہانزیب اعوان نے خواندگی کے عالمی دن کی مناسبت سے گورنمنٹ تبلیغ الاسلام سکول میں منعقدہ خصوصی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ۔ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل بلال فیروز جوئیہ، سی ای او ایجوکیشن محمد طارق اور محکمہ تعلیم کے دیگر حکام بھی اس موقع پر موجود تھے ۔

ڈپٹی کمشنر محمد جہانزیب اعوان نے کہاکہ ضلع جہلم تعلیم کے حوالے سے صوبہ پنجاب میں نمایاں حثیت رکھتا ہے اور اس ضلع میں خواندگی کی شرح 79 فیصد ہے اور آیندہ سالوں میں ضلع جہلم میں 100فیصد خواندگی کی شرح کو یقینی بنایا جائیگا۔انہوں نے کہاکہ لٹریسی اینڈ نان فارمل بیسک ایجوکیشن کے زیر انتظام قائم تعلیمی مراکز میں پڑھنے والے بچے کسی بھی تعلیمی ادارے سے کم با صلاحیت نہیں ہیں مگر انہیں مناسب ٹریننگ اور تربیت کی ضرورت ہے تاکہ ان کے اندر موجود پوشیدہ صلاحیتوں کو اجاگر کیا جاسکے ۔

ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل بلال فیروز جوئیہ نے کہاکہ لٹریسی اینڈ نان فارمل ایجوکیشن کا محکمہ صوبہ بھر میں شرح خواندگی میں اضافہ کیلئے کلیدی کرادار ادا کررہاہے اور اس کے اساتذہ تمام تر صلاحیتوں کو بروکار لا کر قوم کی اصل معنوں میں خدمت کر رہے ہیں۔ انہو ں نے کہاکہ سکول نہ جانے والے یا سکولوں سے بھاگے ہوئے بچوں کو تعلیم کی طرف راغب کرنا انتہائی اہم ذمہ داری اور مشکل کام ہے اور نان فارمل بیسک ایجو کیشن سے وابستہ اساتذہ یہی مشکل فریضہ سرانجام دے رہے ہیں۔

تقریب میں فرمال اور نان فارمل بیسک ایجوکیشن کے سنٹرز میں پڑھنے والے بچوں نے ٹیبلوز، ملی نغمے بھی پیش کئے ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.