کھیوڑہ کی 7 کلومیٹر لمبی مین واٹرسپلائی لائن میں سینکڑوں ناجائز کنکشن، علاقہ کو پانی کی سپلائی متاثر

0

کھیوڑہ: کھیوڑہ کی 7 کلومیٹر لمبی مین واٹر سپلائی لائن سے کمرشل استعمال کے لیے دیے گئے سینکڑوں ناجائز کنکشن آبادی کو پانی کی فراہمی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہیں،ان کنکشنز کا کوئی مکمل باضابطہ ریکارڈ بھی مقامی انتظامیہ کے پاس موجود نہیں ہے جو کرپشن کی واضع مثال ہے، ایک ناجائز کنکشن لاکھوں روپے مالیت سے بننے والی کئی گلیوں کی تباہی کا باعث جبکہ 01 کنکشن سے مزید 20,20 ناجائز کنکشن کا کاروبار انتظامیہ کے ناک تلے عرصہ دراز سے جاری ہے ، سینکڑوں ناجائز کنکشنز کی وجہ سے جہاں کھیوڑہ کی عوام پانی جیسی بنیادی سہولت کی منصفانہ تقسیم سے محروم ہے وہی گلیاں بار بار کھدائی سے کھنڈرات بن چکی ہیں۔ ڈی سی جہلم سے فوری ایکشن کا عوامی مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق دنیا کی دوسری بڑی نمک کی کان کی وجہ سے دنیا بھر میں ایک منفرد پہچان کا حامل پاکستان کا مشہور صنعتی اور سیاحتی علاقہ کھیوڑہ انتظامیہ کی عدم دلچسپی کے باعث کھنڈات میں تبدیل ہو رہا ہے۔

کھیوڑہ کی 70 ہزار سے زائد آبادی کو پانی کی فراہمی کے لیے 07 کلومیٹر دور پنڈدادنخان سے ٹربائنیں لگا کر بذریعہ مین واٹر سپلائی لائن پانی شہر میں موجود سٹوریج ٹینک تک پانی لایا جاتا ہے جس سے بذریعہ کنٹرول والو آبادی کو پانی شیڈول کے مطابق مناسب سپلائی میونسپل انتظامیہ کی ذمہ داری ہے تاہم کئی کئی ہفتوں کے بعد گھریلوں صارفین کو بمشکل01 گھنٹہ پانی دیا جاتا ہے جس کا بیشتر حصہ خستہ حال بوسیدہ اور زنگ آلود پائپ لائینوں سے نکل کر ضائع ہو جاتا ہے اور اس سپلائی کا کو ئی شیڈول بھی وضع نہیں ہے۔

دوسری جانب بااثر افراد کو 24 گھنٹہ بلا تعطل پانی کی فراہمی جاری رہیتی ہے یہی وجہ ہے کہ یہ سینکڑوں ناجائز کمرشل کنکشن عام آبادی کو ریگولر پانی کی فراہمی میں سب سے بڑی رکاوٹ بن گئے ہیں قابل زکر بات یہ ہے کہ ایک کمرشل کنکشن کی ماہانہ بھاری فیس کی ادائیگی کے لیے کنکشن مالکان نے 20,20 مزیدسب کنکشن دیکر اتک الگ سپلائی سسٹم بنا رکھا ہے۔

ان کنکشنوں کا جال بچھانے کے لیے انتہائی بے دردی سے کروڑوں روپے مالیت کی گلیوں کو تباہ کر دیا جاتا ہے اسطرح جہاں پانی کامسلسل ضیاع ہوتاہے وہی پورا شہر کھنڈر بنتا جارہا ہے، یہ وجہ ہے کہ مین واٹر سپلائی لائن سے ہوٹلوں، گاڑیں کی دھلائی کے لیے متعدد سروس اسٹیشن ،جپسم فیکٹریوں اور دیگر کھیوڑہ کے علاوہ بااثر لوگوں کو ناجائز کنکشن نے پانی کی عام عوام تک فراہمی کو نایاب کر دیا۔

انتظامیہ کے موقف کے مطابق ماہانہ اخراجات پورے کرنے کے لیے کمرشل کنکشن دیے گئے ہیں۔عوام کی اکثریت نے پانی کی غیر منصفانہ تقسیم کوفی الفور ختم کرنے کا عوامی مطالبہ چیف آفیسر و چیئر مین میونسپل کمیٹی کھیوڑہ ، اسسٹنٹ کمشنر پنڈدادنخان، ڈپٹی کمشنر جہلم سے کر دیا ہے۔

Advertisement

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.