پاکستان عوامی تحریک روایتی سیاسی جماعت نہیں، سیاست نظریہ کا نام ہے۔ سید ابرارحسین شاہ

0

جہلم: کسی بھی ریاست کا سیاسی یا یوں کہا جائے کہ جمہوری نظام چلانے کے لئے عوام اپنی ترجمانی کیلئے ووٹ کے ذریعے اپنے نمائندوں کا انتخاب کرتے ہیں ۔یہی نمائندے جب کسی اکٹھ کی صورت میں متحد ہوتے ہیں تو اسے سیاسی جماعت کا نام دیاجاتا ہے۔

ان خیالات کا اظہار پاکستان عوامی تحریک جہلم کے ضلعی صدر اور جہلم کے حلقہ این اے 67 سے امیدوار برائے قومی اسمبلی سیدابرارحسین شاہ نے میڈیا سے گفتگو میں کیا۔انہوں نے کہا کہ ملک بھر میں یوں تو بہت سی پارٹیاں جن کو اگر لاتعداد پارٹیاں کہوں تو بیجا نہ ہوگا۔ان ہی پارٹیوں میں ایک بڑی سیاسی جماعت پاکستان عوامی تحریک ہے۔جن کی سیاسی جدوجہد سے زمانہ آشنا ہے۔پاکستان عوامی تحریک ملک بھر کی طرح جہلم میں بھی کافی متحرک جماعت ہے۔ پاکستان عوامی تحریک نے چند ماہ بعد ہونے والے قومی انتخابات 2018ء میں بھرپور شرکت کا فیصلہ کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جماعتیں تو بہت سی ہیں لیکن پاکستان عوامی تحریک روائتی سیاسی جماعت نہیں ۔ہماری سیاست ایک نظریہ کا نام ہے۔ہمارے قائد ڈاکٹرطاہرالقادری کی علمی و سیاسی بصیرت کو زمانہ بلاشبہ تسلیم کرتا ہے۔انہوں نے آرٹیکل 62/63 کا شعور دے کر سیاست کی دنیا میں انقلاب برپا کر دیا۔عوامی تحریک نے نظریات پر جانی اور مالی قربانیاں دیں۔آئندہ عام انتخابات میں اپنے قومی نظریہ پر حصہ لیں گے۔بیداری شعور عوامی تحریک کی قیادت کی ایک بڑی کامیابی اور قومی خدمت ہے۔

Advertisement

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.