عیدالاضحی کے قریب آتے ہی کپڑوں اور جوتوں کی قیمتیں بھی آسمان سے باتیں کرنے لگیں

0

جہلم: عید الاضحی کے قریب آتے ہی کپڑوں اور جوتوں کی قیمتیں بھی آسمان سے باتیں کرنے لگیں ، بازاروں میں خریداروں کا رش ، کپڑے اور جوتوں کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے سے سفید پوش اور غریب طبقہ بھاؤ پوچھنے تک ہی محدود ہو کر رہ گیا۔

تفصیلات کے مطابق جیسے جیسے عید الاضحی قریب آتی جارہی ہے ویسے ہی کپڑوں اور جوتوں کی مانگ میں بھی اضافہ ہونے سے شہر کے بازاروں میں خریداروں کے رش میں دن بدن اضافہ ہوتا ہوانظرآرہاہے ، بہتی گنگا میں ہاتھ دھونے کے لئے دکانداروں نے بھی کپڑوں اور جوتوں کی قیمتوں میں 50 فیصد اضافہ کرکے مہنگائی کا طوفان برپا کر دیاہے اور یہ بات بھی علم میں آئی ہے کہ دکانداروں نے اپنی دکانوں کے کرایہ جات کے حساب سے جوتوں اور کپڑوں کی قیمتوں کو مقرر کررکھا ہے۔

ایک سروے کے دوران شہریوں نے بتایا کہ عید قریب آتے ہی شہر کے دکانداروں نے کپڑے اور جوتوں کی قیمتوں میں من پسند اضافہ کرکے شہریوں کی جیبوں پر ڈاکہ ڈالنا شروع رکر رکھا ہے، غریب طبقے کے لئے شاپنگ کرنا کسی صورت بھی آسان دکھائی نہیں دیتا ، دکاندار صارفین کی مجبوری کا ناجائز فائدہ اٹھاتے ہوئے لوٹ مارکا بازارگرم کئے ہوئے ہیں اور کپڑے ، جوتوں کے من مانے نرخ وصول کررہے ہیں۔

شہریوں نے ڈپٹی کمشنر سے مصنوعی مہنگائی کرنے والے دکانداروں کے خلاف سخت قانونی کارروائی کرنے کا مطالبہ کیاہے کہ تا عوام کو ریلیف فراہم ہو سکے ۔

Advertisement

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.