پابندی کے باوجود تحصیل پنڈدادنخان اور گردونواح میں گٹکے کی سر عام فروخت جاری

0

کھیوڑہ: حکومت پاکستان کی پابندی کے باوجود غریبوال، دھریالہ، ڈنڈوت، کھیوڑہ سمیت تحصیل کے گردونواح میں گٹکے کی سر عام فروخت جاری ہے ،ذمہ داران نے آنکھیں موندلیں،سستے نشے کی اس لت سے خواتین اور بچوں سمیت نوجوان نسل متعدد جان لیوا بیماریوں میں مبتلاہورہے ہیں جس میں منہ اور جگر کا کینسر بھی شامل ہے،ڈی سی او جہلم سے فوری کاروائی کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق حکومت پاکستان نے ہر قسم کے نشہ آور چیزجس میں مختلف اقسام کے نت نئے گٹکے بھی شامل ہیں کی فروخت پر مکمل پابندی عائد کر رکھی ہے کیونکہ ان مضر صحت گٹکے کے کھانے سے ان گنت لوگ جن میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں منہ اور جگر کے کینسر سمیت کئی اقسام کی بیماریوں میں مبتلاہوکر مستقل طور پر لاعلاج ہوچکے ہیں۔

کینسر کے مریض کا شکار افراد میں ایک بڑی تعداد نوجوانوں کی ہے تاہم حکومتی پابندی کے باوجود تحصیل پنڈدانخان کے گردونواح میں گٹکے کی فروخت سرعام جاری ہے انتظامیہ کی آنکھوں کے سامنے ناعاقبت اندیش دوکان دار تھوڑے سے پیسوں کے خاطر درجنوں مختلف اقسام کے گٹکے فروخت کر رہے ہیں کیونکہ انتظامیہ کی جانب سے انہیں کوئی پوچھنے والانہیں ہے۔

عوامی سماجی حلقوں نے مقامی انتظامیہ سے پر زور مطالبہ کیا ہے کہ ایسے دوکانداروں کے خلاف فوری ایکشن لیاجائے تاکہ اس بیماری سے معاشرے میں خصوصاً نوجوان نسل کو بچایاجاسکے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.