Daily updated News, Photo & Vidoes website of Jhelum, Pakistan

پاکستان میں بھی آنکھوں کی بیماری کی شرح بڑھتی جارہی ہے ۔ ڈاکٹر علی حیدر مرزا

0

پنڈدادنخان: پا کستان کے مایہ ناز اور معروف ماہر امراض چشم ڈاکٹر علی حیدر مرزا نے کہا ہے کہ ترقی پذیر ممالک جیسا کہ پاکستان میں بھی آنکھوں کی بیماری کی شرح بڑھتی جارہی ہے قابل فکر بات یہ ہے کہ ہمارا جوان طبقہ بھی اس مرض کا شکار ہو رہا ہے اور اس بیماری کے نتیجے میں معاشی مسائل کے ساتھ بے پناہ معاشرتی مسائل بھی جنم لے رہے ہیں زندگی اللہ تبارک تعالیٰ کی امانت ہے اور آنکھ خدا کی عظیم ترین نعمت ہے اس لیے ہمیں اس کی قدر کرنی چاہیے ۔

انہوں نے ضلع جہلم کے سینئر صحافی اور دانشوریوسف ناز کو خصوصی انٹرویو میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ شوگر بیماریوں کی ماں ہے شوگر کی بیماری خون کی شر یانوں کو نقصان پہنچا کر جسم کے اندر سے دیمک کی طرح کھوکھلا کر دیتی ہے اسی وجہ سے جسم میں قوت حس کم یو جاتی ہے جس کے باعث بلڈ پریشر ،دل کے امراض کے علاوہ گردوں اور آنکھوں کو بھی نقصان پہنچتا ہے یہ عمر بھر کی بیماری ہے اس سے غفلت خطرناک ہے شوگر کی وجہ سے آنکھ کے پردے پر خون اور نالیاں بند ہو سکتی ہیں اس لئے لیزر کے جدید ترین طریقہ سے آپریشن کروانا چاہیے اس طریقہ علاج میں آنکھ کی قدرتی بناوٹ پر کوئی اثر نہیں پڑتا جب آنکھ میں دھندلا پن آجائے اور صاف نظر نہ آئے تو فورا اہنے لئے بہترین لینس کا انتخاب کر کے آپریشن کروالینا چاہیے شوگر کے مریضوں کو آنکھوں کی بیماریوں سے بچنے کے لئے احتیاط پر ہیز اور واک ضروری ہے۔

ڈاکٹر حیدر علی نے کہا کہ تحصیل پنڈدادنخان ایک دور افتادہ اور انتہائی پسماندہ ہے اس سب ڈویژن کے کسی سرکاری ہسپتال میں بھی آنکھوں کے اعلاج کا موثر انتظام نہیں اس لیے مریضوں کو لاہور ،اسلام آباد ،راولپنڈی ،منڈی بہاولدین اورر دیگر دور دراز کے شہروں میں جانا پڑتا تھا جس سے سفری مشکلات کے ساتھ ساتھ مالی طور پر بھی بہت سے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا تھا اب پنڈدادنخان میں آنکھوں کی تمام بیماریوں کے جدید علاج کے لئے مغل آئی کلینک کا قیام عمل میں لایا گیا ہے جس میں جدید ترین مشنری اور سہولیات میسر ہیں یہاں نہ منافع نہ نقصان کی بنا پر آپریشن کئے جارہے ہیں جس سے تحصیل بھر کے عوام مستفید ہو رہے ہیں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.