کھیوڑہ کی پہاڑیوں میں مسلح ڈاکوؤں کا پھر ناکہ، ڈاکو درجنوں گاڑیوں کو لوٹ کر فرار

0

کھیوڑہ: پہاڑیوں میں ایک بار پھر پر تشدد ڈکیتیوں کا سلسلہ پھر سے شروع ہو گیا، حالیہ کارروائی میں سرے شام پانچ مسلح ڈاکوں نے درجنوں گاڑیوں کو لوٹ لیا، مسافر اورڈرا ئیورز نقدی ،زیورات اور موبائلز سے محروم، پولیس کی روایتی کارکردگی، کوئی حفاظتی پلان بھی تیار نہیں ہوا۔

تفصیلات کے مطابق کھیوڑہ سے چوآسیدن شاہ جانے والی پہاڑی سٹرک پر گزشتہ چند ہفتوں سے ایک بار پھر پرتشددد ڈکیتیوں کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے ،دوران ڈکیتی لوٹ مار کے ساتھ تشدد کے واقعات سے عوام میں شدید خوف ہراس پھیل چکا ہے۔

ڈکیتی کے متاثرین نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ پانچ سے چھے نقاب پوش مسلح ڈاکوؤں نے پیسے نہ ملنے پر تشدد بھی کیا اور ڈاکوؤں نے مسافروں اور ڈرائیوروں سے نقدی، زیورات اور موبائل فونز لوٹ کر فرار ہو گئے۔

پولیس ذرائع کے مطابق انہوں نے پہاڑی ایریا میں وارداتیں کرنے والوں کو گرفتار کر لیا ہے اس کے باوجود سلسلہ وار کاروائیاں معنی خیز ہیں، متعدد بار پولیس کے اعلی حکام کو ناقص کارکردگی کی بنیادی وجوہات سے آگاہ کیا ہے تاہم ان پر کوئی پلان تیار نہیں کیا گیا ۔

عوامی حلقوںکا کہناہے کہ پولیس چوکی کھیوڑہ کی ایک گاڑی 7کلو میٹر کے لمبے اور پر خطر پہاڑی ایریا میں پٹرولنگ کے لیے نا کافی ہے،پہاڑی علاقے میں موبائل کے سگنل بھی نہیں آتے جسکی وجہ سے مدد طلب کرنا بھی ناممکن ہو جاتا ہے۔

عوامی سماجی حلقوں نے ڈی پی او جہلم سے اس روٹ پر مستقل بنیادوں پر چیک پوسٹ کے قیام، پولیس کی مسلح نفری میں اضافے کے ساتھ ساتھ پٹرولنگ گاڑیاں بڑھانے کا مطالبہ کیا ہے ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.